جرمنی کی سب سے بڑی مسجد میں نمازجمعہ کیلئے اذاں کی اجازت

کولون شہر کے انتظامیہ اورمسلم برادری کے درمیان ایک دوسالہ عبوری معاہدہ کے تحت مذکورہ مسجد کے بشمول شہر کی تمام35مساجدمیں جمعہ کودوپہراور3 بجے سہ پہرکے درمیان 5منٹ کے لیے اذاں دینے کی اجازت ہوگی۔

جرمنی: جرمنی کی سب سے بڑی ’کولون سنٹرل مسجد‘ میں شہرکے انتظامیہ کے ساتھ ایک معاہدہ کے بعد نمازجمعہ کیلئے اذاں دینے کی اجازت دے دی گئی ہے۔

اس مسجد کودائیں بازو کے شدت پسندوں کے مسلم مخالف جذبات کامرکز بننے کے بعد2018میں کھولا گیا تھا۔

کولون شہر کے انتظامیہ اورمسلم برادری کے درمیان ایک دوسالہ عبوری معاہدہ کے تحت مذکورہ مسجد کے بشمول شہر کی تمام35مساجدمیں جمعہ کودوپہراور3 بجے سہ پہرکے درمیان 5منٹ کے لیے اذاں دینے کی اجازت ہوگی۔

کولون کے مئیرہینریٹ ریکر نے ٹوئٹر پر لکھا”موذن کواذاں کی اجازت دینا میرے لئے احترام کی ایک علامت ہے۔“ انہوں نے مزیدکہاکہ یہ فیصلہ تنوع کا عکاس ہے جوکولون میں موجود ہے اورجسے سراہاجاتا ہے۔

خیال رہے کہ جرمنی میں 4.5 ملین مسلمان رہتے ہیں جو ملک میں سب سے بڑے مذہبی اقلیتی گروپ کی حیثیت رکھتے ہیں جبکہ جرمنی کے اکثرشہروں میں مسلم طبقہ کواسلامو فوبک رویہ کا سامناہے۔

ذریعہ
ایجنسیز

تبصرہ کریں

یہ بھی دیکھیں
بند کریں
Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.