محسن فخرزادہ کا قتل ریموٹ مشین گن سے کیا گیا: رپورٹ

رپورٹ میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ بیلجیئم کی بنی ایف این ایم اے جی مشین گن مصنوعی ذہانت سے لیس ہے جسے قتل کے لیے جدید ترین روبوٹک ڈیوائس سے جوڑ کر بنایا گیا ہے۔

واشنگٹن: ایران کے ایٹمی سائنسدان محسن فخر زادہ کو ریموٹ کنٹرول مشین گن سے قتل کیا گیا۔امریکی اخبار نیویارک ٹائمز کی رپورٹ کے مطابق اسرائیلی خفیہ ایجنسی موساد ایرانی ایٹمی سائنسدان محسن فخری زادہ کے قتل میں ملوث تھی اور اس نے قتل کو ریموٹ کنٹرول مشین گن کی مدد سے انجام دیا۔ اس مشین گن نے ایک منٹ سے بھی کم وقت میں مشن مکمل کیا۔

رپورٹ میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ بیلجیئم کی بنی ایف این ایم اے جی مشین گن مصنوعی ذہانت سے لیس ہے جسے قتل کے لیے جدید ترین روبوٹک ڈیوائس سے جوڑ کر بنایا گیا ہے۔ اس کی وجہ سے پوری مشین کا وزن ایک ٹن کے قریب تھا۔ مشین کو چھوٹے چھوٹے ٹکڑوں میں ایران اسمگل کیا گیا تھا اور بعد میں وہاں دوبارہ اسمبل کیا گیا۔

محسن فخر زادہ ایران کے صف اول کے ایٹمی سائنسدان اور آئی آرجی سی کے اعلیٰ عہدیدار تھے۔ انہیں ایران کے ایٹمی پروگرام کا بابا کہا جاتا تھا۔

ذریعہ
یواین آئی

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.