دیوچا کوئلہ پراجکٹ کے لیے معاوضہ پر نظرثانی کی جائے گی :ممتا بنرجی

حکومت اس پراجکٹ کو فروغ دے گی اور خانگی شعبہ کو کوئی اراضی نہیں دی جائے گی ۔ ہم نے کابینی اجلاس میں معاوضہ پر نظر ثانی کی ہے تاکہ لوگوں کو فائدہ ہو ۔

کولکتہ ۔ چیف منسٹر مغربی بنگال ممتا بنرجی نے آج کہا کہ حکومت نے دیوچا پچمی کوئلہ کانکنی پراجکٹ میں اراضی سے محروم ہونے والوں کے لیے معاوضہ میں ترمیم کی ہے اور اس پراجکٹ کے لیے اراضی کو جبری طور پر حاصل نہیں کیا جائے گا ۔

ضلع بیر بھوم میں واقع 35 ہزار کروڑ روپئے کا کوئلہ پراجکٹ ملک کا سب سے بڑا اور دنیا کا دوسرا بڑا پراجکٹ ہوگا ۔ ممتا بنرجی نے کابینہ کے ایک اجلاس کے بعد بتایا کہ ریاستی حکومت کانکنی پراجکٹ کے لیے اراضی حاصل کرنا چاہتی ہے ، جس کی وجہ سے ایک لاکھ ملازمتیں تخلیق ہوںگی ۔

حکومت اس پراجکٹ کو فروغ دے گی اور خانگی شعبہ کو کوئی اراضی نہیں دی جائے گی ۔ ہم نے کابینی اجلاس میں معاوضہ پر نظر ثانی کی ہے تاکہ لوگوں کو فائدہ ہو ۔

اس کے باوجود اگر کوئی اپنی زمین دینا نہیں چاہتا تو اسے مجبور نہیں کیا جائے گا اور ہم اس حصہ کو چھوڑ کر اس پراجکٹ کو فروغ دیںگے ۔

ذریعہ
پی ٹی آئی

تبصرہ کریں

Back to top button