سماج وادی پارٹی کی حکومت بننے پر لوگوں کو نوکریاں دی جائیں گی: اکھیلیش یادو

اکھیلیش یادو نے کہا کہ چیف منسٹر یوگی ”گرمی“کی بات کرتے ہیں، مجھے گرمی کا پتہ نہیں لیکن سماج وادی پارٹی حکومت بننے کے بعد ”بھرتی“ یعنی نوکریاں دی جائیں گی۔

آگرہ: سماج وادی پارٹی صدر اکھیلیش یادو نے اتوار کے دن الزام عائد کیاکہ اترپردیش اسمبلی الیکشن کیلئے جیسے جیسے ان کی پارٹی کی مہم تیز ہوتی جارہی ہے ریاست میں مختلف مقامات پر لوگوں کو دھمکایاجارہا ہے۔ باہ اور اعتمادپور میں الیکشن ریالیوں سے خطاب میں اکھیلیش نے کہا کہ میں نے سنا ہے کہ سماج وادی پارٹی کی انتخابی مہم جیسے جیسے تیزہوتی جارہی ہے لوگوں کو دھمکیاں دی جارہی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ان دنوں موبائل فون ریکارڈنگ کے ساتھ دستیاب ہے۔ اگر آپ کو کوئی دھمکاتا ہے تو ویڈیوبنالیجئے اور یہ ویڈیو ایف آئی آر سمجھی جائے گی۔ بھارت رتن لتا منگیشکر کو خراج عقیدت ادا کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ریاست میں ان کی پارٹی کی حکومت بننے کے بعد لتا جی کی یاد میں ایک بڑا کام کیاجائے گا۔ اکھیلیش نے کہا کہ میں یہاں اس لئے اپیل کرنے آیاہوں کہ یہ الیکشن صرف یوپی کا الیکشن نہیں ہے بلکہ ملک کے مستقبل کا الیکشن ہے۔ انہوں نے الزام عائد کیاکہ بھارتیہ جنتا پارٹی نے پولیس کو تک نظرانداز کیا۔

سماج وادی پارٹی نے ڈائل 100 سرویس شروع کی تھی تاکہ دیہی علاقوں میں رہنے والے مشکل کی گھڑی میں پولیس کو کال کرسکیں۔ ڈائل100 ابھی بھی کام کررہی ہے لیکن بابا (چیف منسٹریوگی آدتیہ ناتھ) نے اس کے پہیے نہیں بدلے ہیں۔ انہوں نے ڈائل100کو 112کردیا۔ انہوں نے کہا کہ نظم وضبط کی صورتحال بہتربنانے سماج وادی پارٹی حکومت پولیس گاڑیوں میں اضافہ کرے گی۔ سماج وادی پارٹی سربراہ نے الزام عائد کیاکہ کورونا وباء کے دوران بی جے پی حکومت دوائیں‘آکسیجن اور علاج کی فراہمی میں ناکام رہی۔

 اس وقت اگر کوئی مددکررہاتھا تو وہ سماج وادی پارٹی حکومت کی شروع کردہ ایمبولنس تھیں۔ ایمبولنس لوگوں کے گھروں پر پہنچ رہی تھیں۔ انہوں نے کہا کہ سماج وادی پارٹی کے سربراہ ملائم سنگھ یادونے لکھنو میں انسٹی ٹیوٹ آف میڈیکل سائنسیس بنایا۔ ہم نے ریاست میں طبی سہولتوں کو مستحکم کیا۔ بی جے پی نے سابق وزیراعظم واجپائی کے نام پر صرف ایک یونیورسٹی بنانے کا اعلان کیالیکن اس کی تعمیر میں ناکام رہی۔

اکھیلیش نے کہا کہ ان کی پارٹی کے برسرِ اقتدار آنے کے بعد واجپائی یونیورسٹی واجپائی کے آبائی مقام بتیشور (ضلع آگرہ) میں بنائی جائے گی۔ انہوں نے برقی سربراہی کیلئے باقاعدہ انتظامات یقینی بنانے کا وعدہ کیا اور کہا کہ ضرورت پڑنے پر مزید سب اسٹیشنس قائم ہوں گے۔ اکھیلیش یادو نے کہا کہ چیف منسٹر یوگی ”گرمی“کی بات کرتے ہیں، مجھے گرمی کا پتہ نہیں لیکن سماج وادی پارٹی حکومت بننے کے بعد ”بھرتی“ یعنی نوکریاں دی جائیں گی۔

سماج وادی پارٹی سربراہ نے الزام عائد کیاکہ بی جے پی دورحکومت میں آلو کی کاشت کرنے والوں کو ان کی پیداوار کے مناسب دام نہیں ملے۔ ہم ایک پراسیسینگ پلانٹ قائم کریں گے اور ضرورت پڑنے پر حکومت اس کیلئے سبسیڈی دے گی۔

ذریعہ
یواین آئی

تبصرہ کریں

Back to top button