اونٹ واڑی قبرستان میں گھوڑے باندھے جاتے ہیں

قبور کی بے حرمتی کے بارے میں ایک دہے سے زائدعرصہ سے وقف بورڈ سے نمائندگی کی جاتی رہی ہے اور وقف بورڈ کئی مرتبہ اس قبرستان میں باندھے جانے والے جانور کو ہٹادیتا ہے مگر کچھ دن بعد ہی یہ لوگ پھر سے قبرستان میں جانوروں کو باندھنا شروع کردیتے ہیں۔

حیدرآباد: اونٹ واڑی قبرستان واقع چوڑی بازار کے نام کی ہی تاثیر ہے کہ اس قبرستان میں مقامی لوگ قبروں پر اونٹ اور گھوڑے باندھتے رہتے ہیں۔

قبور کی بے حرمتی کے بارے میں ایک دہے سے زائدعرصہ سے وقف بورڈ سے نمائندگی کی جاتی رہی ہے اور وقف بورڈ کئی مرتبہ اس قبرستان میں باندھے جانے والے جانور کو ہٹادیتا ہے مگر کچھ دن بعد ہی یہ لوگ پھر سے قبرستان میں جانوروں کو باندھنا شروع کردیتے ہیں۔

جب ان لوگوں سے کوئی غیرت مند سوال کرتا ہے کہ وہ ایسا کیوں کرتے ہیں تو وہ بڑی ڈھٹائی سے سے جواب دیتے ہیں کہ وہ قبرستان ان کے اجداد کا ہی ہے۔ وقف بورڈ بھی شائد اس قبرستان میں مدفون مسلمانوں کے تئیں کوئی خاص جذبہ نہیں رکھتا اس لئے ہر وقت اس کی کارروائی عارضی ثابت ہوتی ہے۔

قبور کی بے حرمتی پر صدر دکن وقف پراپرٹیز پروٹیکشن سوسائٹی عثمان بن محمد الہاجری نے سال 2013 ء میں ایک رٹ درخواست بھی دائر کی تھی جس پر سی ای او، وقف بورڈ نے اس قبرستان کے تقدس کی بحالی کے لئے کئے جانے والے امور سے ہائی کورٹ کو واقف کرواتے ہوئے تیقن دیا تھا کہ قبرستان کا تحفظ کیا جائے گا۔

تاہم اس کے بعد کئی مرتبہ مقامی مسلمانوں نے وقف بورڈ سے نمائندگی کرتے ہوئے قبرستان میں جانوروں کے باندھے جانے کی شکایت کی۔ جب کبھی شکایت کی جاتی، وقف بورڈ کے حکام،چند ملازمین کو روانہ کرتے ہوئے پولیس کی مدد سے جانوروں کو وہاں سے ہٹادیتے مگر یہ لوگ کچھ ہی دیر بعد پھر سے جانوروں کو قبرستان میں باندھنا شروع کردیتے ہیں۔

وقف بورڈ کے ملازمین کا کہنا ہے کہ شادی بیاہ میں بارات کے لئے گھوڑا بنڈی فراہم کرنے والے یہ لوگ بہت زیادہ اثر و رسوخ رکھنے والے ہیں۔ بعض اوقات تو وہ ہمیں ہی قبرستان میں داخل ہونے سے روک دیتے ہیں اور کچھ حرکت ہوتے ہی فوری وہ اپنے سیاسی آقاؤں اور مقامی قائدین کو طلب کرلیتے ہیں۔

ان تمام برسوں میں قبرستان اور وہاں مدفون مسلمانوں کے قبور کے تقدس کی بحالی کے لئے وقف بورڈ ناکام ہی رہا ہے، شائد کہ مسلمان ہی کوئی ٹھوس اقدام کرتے ہوئے قبور کی بے حرمتی کے سلسلہ دراز کو ختم کریں گے۔

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.