سعودی عرب میں 80 لاکھ کا انجکشن معصوم بچی کو مفت دیاگیا

بچی کے والد نے بتایا کہ ان کی بچی عضلات کے موروثی مرض میں مبتلا ہے، اسے دنیا کا مہنگا ترین انجکشن تجویز کیا گیاجس کا نام زولگنسما ہے۔

ریاض: سعودی شہری مساعد الشہرانی نے کہا ہے کہ کنگ فیصل اسپیشلسٹ ہسپتال نے اپنے یہاں زیر علاج میری بچی کو80لاکھ ریال کا ایک انجکشن مفت فراہم کیا ہے۔

بچی کے والد نے بتایا کہ ان کی بچی عضلات کے موروثی مرض میں مبتلا ہے، اسے دنیا کا مہنگا ترین انجکشن تجویز کیا گیاجس کا نام زولگنسما ہے۔ سعودی ذرائع ابلاغ کے مطابق الشہرانی نے اس حوالے سے اپنے اکاؤنٹ پر جو ٹویٹ کیا ہے وہ سوشل میڈیا پر خوب وائرل ہورہا ہے۔

الشہرانی نے لکھا کیا کہ میری بیٹی کا علاج کنگ فیصل اسپیشلسٹ اسپتال میں ہورہا ہے، حکومت نے اس کی زندگی کے لیے مجوزہ 80 لاکھ کے انجکشن کا بندوبست آسانی سے کردیا، بلاشبہ سعودی عرب میں انسان انمول ہے۔

یاد رہے کہ مذکورہ انجکشن موروثی خرابی سے پیدا ہونے والے مہلک مرض کی مؤثر دوا ہے، یہ مرض انسانی عضلات کواس حد تک کمزور کردیتا ہے کہ وہ چلنے پھرنے تک کے قابل نہیں رہتا۔

امریکی حکام نے سال2019 میں مذکورہ دوا کی منظوری دی تھی جسے نوفارتیس کمپنی سوئٹزر لینڈ میں تیار کرتی ہے، عام لوگوں سے اس کی قیمت 2.1 ملین ڈالر وصول کی جاتی ہے، اسے اس وقت دنیا کا سب سے مہنگا ترین انجکشن مانا جاتا ہے۔

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.