مدھیہ پردیش میں مسلم کباڑی پر حملہ

یہ واقعہ ہفتہ کے دن پیش آیا اور اس کی دو ویڈیوز سوشل میڈیا پر وائرل ہوئی تھیں۔ میڈیا نمائندوں سے بات چیت میں سب ڈیویژنل آفیسر آف پولیس (ایس ڈی او پی) آر کے رائے نے بتایا کہ واقعہ ہفتہ کے دن پیش آیا۔

بھوپال/اجین: مدھیہ پردیش کے ضلع اجین کے ایک موضع میں دو افراد نے ایک مسلم کباڑی کو مبینہ طورپر دھمکایا اور جئے سری رام کا نعرہ لگانے پر مجبور کیا جس کے بعد پولیس نے دونوں ملزمین کو گرفتار کرلیا۔ ایک پولیس عہدیدار نے اتوار کے دن یہ بات بتائی۔

یہ واقعہ ہفتہ کے دن پیش آیا اور اس کی دو ویڈیوز سوشل میڈیا پر وائرل ہوئی تھیں۔ میڈیا نمائندوں سے بات چیت میں سب ڈیویژنل آفیسر آف پولیس (ایس ڈی او پی) آر کے رائے نے بتایا کہ واقعہ ہفتہ کے دن پیش آیا۔

کباڑی عبدالرشید یہاں عرصہ سے کاروبار کر رہا ہے۔ وہ کباڑ لینے کیلئے منی ٹرک میں دوسرے موضع گیا تھا۔ اس موضع میں رشید کو واپس جانے پر مجبور کردیا گیا۔ اسے دھمکایا گیا کہ وہ علاقہ میں اپنا کاروبار نہ کرے۔

وہ جب گاؤں سے روانہ ہوا تو دو افراد نے اسے روکا‘ مارا پیٹا اور جئے سری رام کا نعرہ لگانے پر مجبور کیا۔ رشید کسی طرح اپنی جان چھڑا کر وہاں سے نکلا۔

اس واقعہ پر اپنے رد عمل میں مدھیہ پردیش کانگریس کے صدر کمل ناتھ نے کہا کہ اندور اور دیواس میں سابق میں ایسے واقعات پیش آچکے ہیں۔

انہوں نے سوال کیا کہ کیا یہ کسی خاص ایجنڈہ کے تحت ہورہے ہیں؟ حکومت خاموش تماشائی بنی ہوئی ہے۔ پوری ریاست میں لاقانونیت کا ماحول تیار کیا جارہا ہے‘ قانون کا مذاق اڑایا جارہا ہے۔ انہوں نے ملزمین کے خلاف سخت کارروائی کا مطالبہ کیا۔

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.