یوپی کے سابق آئی پی ایس عہدیدار امیتابھ ٹھاکر گرفتار

حضرت گنج پولیس نے ایس آئی ٹی کی رپورٹ کی بنیاد پر درج ایف آئی ار کے بعد سابق آئی پی ایس افسر کو گرفتار کیا۔ رپورٹ میں عصمت دری کے شکار کو خودکشی پر اکسانے کا الزام ہے۔

لکھنئو: اترپردیش کے چیف منسٹر یوگی آدتیہ ناتھ کے خلاف 2022 کا اسمبلی انتخاب لڑنے کا اعلان کرنے والے ریٹائرڈ آئی پی ایس افسر امیتابھ ٹھاکرکو پولیس نے جمعہ کو گرفتار کرلیا۔

حضرت گنج پولیس نے ایس آئی ٹی کی رپورٹ کی بنیاد پر درج ایف آئی ار کے بعد سابق آئی پی ایس افسر کو گرفتار کیا۔ رپورٹ میں عصمت دری کے شکار کو خودکشی پر اکسانے کا الزام ہے۔

گومتی نگر واقع رہائش گاہ سے ٹھاکر کو گرفتارکرنے کے دوران کچھ دیر تک ڈرامہ چلا۔ سابق افسر پولیس کے چنگل سے نکلنے کی کوشش کر تے ہوئے کہہ رہے تھے کہ انہیں ایف آئی آر کی کاپی اور وارنٹ گرفتاری دکھائی جائے۔ پولیس اہلکاروں کو سابق آئی پی ایس کو جیپ میں ڈالنے کے لیے سخت جدوجہد کرنی پڑی۔

حضرت گنج کوتوالی میں سینئر پولیس سب انسپکٹر دیا شنکر دویدی نے بی ایس پی کے رکن پارلیمنٹ اتل رائے اور سابق آئی پی ایس امیتھابھ ٹھاکر کے خلاف تعزیرات ہند کی دفعہ 120 بی، 167، 195 اے، 218، 396، 594 اور 506 کے تحت ایف آئی آر درج کرائی ہے۔ ٹھاکر پر عصمت دری کی متاثرہ کو خودکشی کے لئے اکسانے کاالزام ہے۔ انہیں حضرت گنج تھانے میں رکھا گیا ہے۔

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.