سہارا سربراہ سبرتا رائے کے خلاف وارنٹ گرفتاری جاری

پٹنہ ہائی کورٹ نے جمعہ کے دن سہارا انڈیا کے صدرنشین سبرتارائے کے خلاف وارنٹ ِ گرفتاری جاری کردیا کیونکہ وہ باربار سمن بھیجے جانے کے باوجود عدالت میں حاضر نہیں ہورہے تھے۔

پٹنہ: پٹنہ ہائی کورٹ نے جمعہ کے دن سہارا انڈیا کے صدرنشین سبرتارائے کے خلاف وارنٹ ِ گرفتاری جاری کردیا کیونکہ وہ باربار سمن بھیجے جانے کے باوجود عدالت میں حاضر نہیں ہورہے تھے۔

ہائی کورٹ نے ڈائرکٹر جنرل پولیس (ڈی جی پی) بہار اور اترپردیش کے علاوہ پولیس کمشنر دہلی کو ہدایت دی کہ انہیں گرفتار کرکے حاضر ِ عدالت کیا جائے۔

جسٹس سندیپ کمار کی بنچ‘ سبرتارائے کے خلاف کروڑہا روپیوں کی دھوکہ دہی کے کیسس کی سماعت کررہی ہے۔ ان کے خلاف 2 ہزار سے زائد کیسس درج ہوئے ہیں۔

عدالت نے کہا کہ تاجر کو کافی وقت دیا گیا لیکن وہ عدالت نہیں آئے لہٰذا وارنٹ ِ گرفتاری جاری کیا جاتا ہے۔ عدالت نے ان سے 11 مئی کو عدالت آنے کو کہاتھا لیکن وہ نہیں آئے جس پر عدالت نے ان کے خلاف سخت ریمارکس کئے اور کہا کہ وہ قانون سے بالاتر نہیں۔

جسٹس سندیپ کمار نے جمعرات 12 مئی اور جمعہ 13مئی کو بھی انہیں طلب کیا لیکن ان کے وکیل نے ان کی پیرانہ سالی کی دہائی دی جسے عدالت نے نہیں مانا۔

تبصرہ کریں

Back to top button