شہر حیدرآباد میں ٹماٹر کی قیمت 80 روپئے فی کلو

زرعی مارکٹ کے عہدیداروں نے کہاکہ کم مقدار میں ٹماٹر کی آمد کی وجہ سے اس کی قیمت میں غیرمعمولی اضافہ ہوگیا ہے۔موجودہ طورپر ضلع نظام آباد کے انکاپور سے 30فیصد ٹماٹرحیدرآباد لایاجارہا ہے۔

حیدرآباد: شہرحیدرآباد میں ٹماٹر کی قیمت 80 روپئے فی کلو ہوگئی ہے۔ شدید گرمیوں کے باعث باورچی خانہ کی اس اہم شئے کی قیمت پر اثرپڑا ہے۔ شہر کی ہول سیل مارکٹس میں روزانہ تقریبا 9ہزار ٹماٹر کے کریٹس لائے جاتے تھے جن کی تعداد گھٹ کر اب تین ہزارتک ہی محدود ہوگئی ہے۔

زرعی مارکٹ کے عہدیداروں نے کہاکہ کم مقدار میں ٹماٹر کی آمد کی وجہ سے اس کی قیمت میں غیرمعمولی اضافہ ہوگیا ہے۔موجودہ طورپر ضلع نظام آباد کے انکاپور سے 30فیصد ٹماٹرحیدرآباد لایاجارہا ہے۔ بقیہ 70فیصد ٹماٹرراجستھان کے جئے پور، مہاراشٹرکے ناندیڑسے شہر لایاجارہا ہے جہاں 25کلوٹماٹر کے باکس کی قیمت 1500روپئے ہے۔

انکاپورسے لائے جانے والے ٹماٹر کے ڈبہ کی قیمت 1150روپئے ہے۔شہر کے رعیتوبازاروں میں فی کلوٹماٹر کی قیمت 50روپئے دیکھی جارہی ہے۔

ٹماٹر کی قیمت میں اضافہ سے جہاں کسان فکر مند ہیں وہیں گھریلو خواتین کی تشویش میں بھی اضافہ ہوگیا ہے اورسر پر تاج ولال نظر آنے والا ٹماٹر اب صرف دور ہی سے بھلا معلوم ہورہا ہے۔ ٹماٹر کی قیمت میں حالیہ چند دنوں میں ہوئے بتدریج اضافہ سے عام آدمی کا سر چکرانے لگا ہے اور ایک کیلو ٹماٹر کی خریداری نہ صرف اس کے جیب پر بھاری بوجھ بن گئی ہے بلکہ اس کے ماہانہ بجٹ پر بھی اثر انداز ہورہی ہے۔

بازاروں اور ٹھیلہ بنڈیوں پر کبھی ٹماٹر سجائے جاتے تھے اور خریداروں کا ہجوم ان بنڈیوں اور بازاروں میں ٹماٹر کی خریداری کرتا ہوا دیکھا جاتا تھا۔ ٹماٹر کی قیمتوں میں اضافہ سے عوام کی پریشانیوں میں بھی اضافہ ہوگیا ہے جن کا ماننا ہے کہ حکومت کو اس خصوص میں فوری مداخلت کرنی چاہئے تاکہ ان کو راحت نصیب ہو۔

‘ٹماٹر کی قیمتوں میں کافی اضافہ ہوگیا ہے جو ہماری دسترس سے باہر ہے۔ اب ہم اسے زیادہ خرید نہیں رہے ہیں کیونکہ قیمتوں میں حالیہ دنوں میں کافی اضافہ ہوگیا ہے“۔ ایک 50 سالہ خاتون جو تقریباً ہر روز منڈی میر عالم میں سبزیوں کی خریداری کرتی ہیں‘ نے یہ بات بتائی۔

خاتون کا ماننا ہے کہ اس اضافہ نے گھریلو خواتین کی کمر توڑ کر رکھ دی ہے اور گھر کا بجٹ دگنا ہوگیا ہے۔ اس اضافہ کا اثر دیگر سبزیوں پر بھی پڑا ہے اور گھریلو خواتین کو اب بجٹ بنانے میں دن میں تارے نظر آرہے ہیں۔

ایک تاجر کا کہنا ہے کہ قیمتوں میں کافی اضافہ ہوا ہے جس سے سبزی مارکٹس میں مال بھی کم آرہا ہے کیونکہ زیادہ دنوں تک ٹماٹر کو رکھنے سے اس کے خراب ہونے کا خدشہ ہوتا ہے اور اس کی خریداری کے لئے جو رقم خرچ کی گئی اس کا نکلنا بھی دشوار ہورہا ہے۔ اسی لئے کم مقدار میں ٹماٹر کو بازار میں لایا جارہا ہے۔

تبصرہ کریں

Back to top button