فیس بک کے سی ای او زکربرگ کے خلاف یوپی میں ایف آئی آر

ضلع قنوج کے امیت کمار نے زکربرگ اور دیگر 49 افراد کے خلاف کیس درج کرایا۔ اس نے عدالت سے کہا کہ فیس بک پیج ”بوا ببوا“ پر سماج وادی پارٹی سربراہ کی امیج مسخ کرنے کی کوشش کی گئی۔ اس نے 25 مئی کو سپرنٹنڈنٹ پولیس سے شکایت کی تھی۔

قنوج (اترپردیش):سماج وادی پارٹی (ایس پی) صدر اکھلیش یادو کے خلاف مبینہ متنازعہ پوسٹ پر فیس بک کے سی ای او مارک زکربرگ کے خلاف کیس درج ہوا ہے۔ کیس‘ ضلع قنوج کی ایک عدالت میں فائل ہوا۔ ایف آئی آر میں زکربرگ کے علاوہ 49  دیگر افراد کے نام ہیں۔ زکربرگ نے کچھ نہیں کیا لیکن ایف آئی آر میں ان کا نام اس لئے آیا ہے کہ پوسٹ کے لئے ان کاپلیٹ فارم استعمال ہوا۔

 ضلع قنوج کے امیت کمار نے زکربرگ اور دیگر 49  افراد کے خلاف کیس درج کرایا۔ اس نے عدالت سے کہا کہ فیس بک پیج ”بوا ببوا“ پر سماج وادی پارٹی سربراہ کی امیج مسخ کرنے کی کوشش کی گئی۔ اس نے 25 مئی کو سپرنٹنڈنٹ پولیس سے شکایت کی تھی۔ کوئی کارروائی نہ ہونے پر وہ عدالت سے رجوع ہوا۔

عدالت کے کہنے پر کیس درج ہوا۔”بوا ببوا“ کی اصطلاح اُس وقت وضع ہوئی تھی جب بی ایس پی سربراہ مایاوتی اور اکھلیش یادو نے جو ایک دوسرے کے کٹر حریف تھے‘ 2019 کے پارلیمانی الیکشن میں اتحاد کیا تھا۔ ایک سینئر پولیس عہدیدار نے بتایا کہ دوران ِ تحقیقات زکربرگ کا نام ہٹادیا گیا جبکہ پیج اڈمنسٹریٹر کے خلاف تحقیقات جاری ہیں۔

ذریعہ
آئی اے این ایس

تبصرہ کریں

Back to top button