مذہب تبدیل کرانے کا الزام، یوپی میں 2 خواتین کے خلاف مقدمہ

نئی منڈی پولیس اسٹیشن میں ان کے خلاف اترپردیش غیرقانونی تبدیلی مذہب پر امتناع کے آرڈیننس کی کئی دفعات کے تحت کیس درج کرلیا گیا ہے۔

مظفرنگر: لوگوں کو رقم کی پیش کش کرتے ہوئے عیسائی بنانے کی کوشش کے الزام میں آج یہاں 2 دلت خواتین کے خلاف مقدمہ درج کرلیا گیا۔

پولیس نے بتایا کہ ان خواتین کی سیما اور کلپنا کی حیثیت سے شناخت کی گئی ہے۔

نئی منڈی پولیس اسٹیشن میں ان کے خلاف اترپردیش غیرقانونی تبدیلی مذہب پر امتناع کے آرڈیننس کی کئی دفعات کے تحت کیس درج کرلیا گیا ہے۔

بابی نامی ایک خاتون کی شکایت پر ملزمین کے خلاف کیس درج کیا گیا ہے۔ جنہوں نے اس خاتون کو پانچ لاکھ روپے اور عیسائیت کے تحت اس کے بچوں کی شادی کرانے کی لالچ دیتے ہوئے مذہب تبدیل کرانے کی کوشش کی۔

نیو منڈی پولیس اسٹیشن کے ایس ایچ او پنکج پنت نے یہ بات بتائی۔ اطلاعات کے مطابق بعض ہندو گروپس نے پولیس اسٹیشن کے روبرواحتجاج منظم کیا اور خواتین کے خلاف کاروائی کیلئے پولیس پر دباؤ ڈالا۔

ذریعہ
پی ٹی آئی

تبصرہ کریں

Back to top button