مہاراشٹرا کی بدقسمتی ہے کہ یہاں پر یوگی نہیں ہے: راج ٹھاکرے

ٹھاکرے نے جمعرات کو ٹوئٹ کیا' مذہبی مقامات خاص کر مساجد سے لاوڈ اسپیکر اتارنے کے لئے میں تہہ دل سے یوگی حکومت کو مبارک باد دیتا ہوں اور شکریہ ادا کرتا ہوں ۔

لکھنؤ: مذہبی مقامات سے لاوڈ اسپیکر اتارے جانے کے اترپردیش حکومت کے فیصلے کی تعریف کرتے ہوئے مہاراشٹرا نونرمان سینا کے صدر راج ٹھاکر نے کہا کہ یہ مہاراشٹرا کی بدقسمتی ہے کہ یہاں کوئی یوگی نہیں بلکہ صرف’ستہ بھوگی’ (اقتدار سے لطف اندوز ہونے والے) ہیں۔

ٹھاکرے نے جمعرات کو ٹوئٹ کیا’ مذہبی مقامات خاص کر مساجد سے لاوڈ اسپیکر اتارنے کے لئے میں تہہ دل سے یوگی حکومت کو مبارک باد دیتا ہوں اور شکریہ ادا کرتا ہوں ۔ بدقسمتی ہے کہ مہاراشٹرا میں کوئی یوگی نہیں بلکہ صرف اقتدار کے بھوکے لوگ ہیں۔ مہاراشٹرا حکومت کی بہتر عقل کے لئے ایشور سے دعا گو ہوں۔

قابل ذکر ہے کہ یوپی حکومت نے ہائی کورٹ کی ہدایت پر عمل درآمد کے تحت مذہبی مقامات پر لگے لاوڈ اسپیکر کو ہٹانے یا ان کی آواز کم کرنے کی مہم چھیڑ رکھی ہے۔ 30اپریل تک چلنے والی مہم میں 11 ہزار سے زیادہ لاؤڈاسپیکر ہٹائے جاچکے ہیں جبکہ 40ہزار سے زیادہ کی آواز میں کمی کی جاچکی ہے۔

یہ بھی پڑھیں
ذریعہ
یواین آئی

تبصرہ کریں

Back to top button