نفرت بھڑکانے والی تقاریر کامعاملہ

وسیم رضوی کے خلاف شہر کوتوالی میں نفرت بھڑکانے والی تقاریر کے لئے معاملہ درج تھا۔ ہریدوار میں ہوئی دھرم سنسدمیں ان پر ایک خاص طبقہ کے خلاف متنازعہ بیان بازی کرنے کا الزام تھا جس کے بعد ان کے خلاف شہر کوتوالی میں معاملہ درج کیا گیا تھا۔

ہردوار: اتراکھنڈ کی ہریدوار کوتوالی پولیس نے نفرت بھڑکانے والی تقاریر کے معاملہ میں جمعرات کو مسلمان سے ہندو بنے وسیم رضوی عرف جتیندر تیاگی کو گرفتار کیا ہے۔

وسیم رضوی کے خلاف شہر کوتوالی میں نفرت بھڑکانے والی تقاریر کے لئے معاملہ درج تھا۔ ہریدوار میں ہوئی دھرم سنسدمیں ان پر ایک خاص طبقہ کے خلاف متنازعہ بیان بازی کرنے کا الزام تھا جس کے بعد ان کے خلاف شہر کوتوالی میں معاملہ درج کیا گیا تھا۔

اس معاملہ پر چہارشنبہ کو سپریم کورٹ نے ریاستی حکومت کو نوٹس جاری کی تھی جس کے بعد حرکت میں آئی ہریدوار پولیس نے جمعرات کو وسیم رضوی کو گرفتار کرلیا ہے۔

خیال رہے کہ گزشتہ دنوں ہریدوار میں کچھ سادھو سنتوں نے ایک دھرم سنسد کا انعقاد کیا تھا جس میں اقلیتوں کے خلاف قابل اعتراض تبصرے کئے گئے تھے جن کا پورے ملک میں کافی اثر ہوا تھا۔

اس کے بعد وسیم رضوی اور جتیندر نارائن تیاگی کے خلاف ہریدوار میں معاملہ درج کیا گیا تھا۔

ذریعہ
یو این آئی

تبصرہ کریں

Back to top button