نوجوانوں کی ملازمت چھیننا مودی حکومت کو مہنگا پڑے گا: راہول گاندھی

راہول گاندھی نے کہاکہ اب ریلوے میں پچاس فیصد ملازمتیں ہمیشہ کے لئے ختم، 91,629عہدوں پر اب کبھی بھرتی نہیں۔ گاوں سے شہر تک نوجوان، ریلوے اور آرمی اور بھرتی کے لئے دن رات مصروف ہیں مگر مودی حکومت میں بھرتی اور امید دونوں ختم۔

نئی دہلی: کانگریس کے سابق صدر راہول گاندھی نے وزیراعظم مودی پر حملہ کرتے ہوئے کہاکہ ان کی قیادت والی حکومت نوجوانوں کو روزگار دینے کے بجائے ان کی ملازمت چھین رہی ہے اور یہ کام اس کو مہنگا پڑے گا۔ گاندھی نے ٹوئٹ کیا کہ مودی حکومت نئی ملازمت نہیں دے رہی لیکن بچی ہوئی ملازمتیں چھیننے کی ضرور صلاحیت رکھتی ہے۔

یاد رہے کہ یہی نوجوان آپ کے اقتدار کا گھمنڈ توڑیں گے۔ ان کا مستقبل برباد کرنا اس حکومت کو مہنگا پڑے گا۔ اس کے ساتھ ہی انہوں نے ایک خبر پوسٹ کی ہے جس میں لکھا ہے کہ ریلوے میں 90000عہدوں پر ملازمت ملنے کی امید ختم ہوگئی ہے۔

کانگریس کے محکمہ مواصلات کے سربراہ رندیپ سنگھ سرجے والا نے بھی اس معاملہ پر حکومت پر حملہ کرتے ہوئے کہاکہ بے روزگاری نے 45سال کا ریکارڈ توڑا، کروڑوں نے روزگار کی امید چھوڑ دی، اب ریلوے میں پچاس فیصد ملازمتیں ہمیشہ کے لئے ختم، 91,629عہدوں پر اب کبھی بھرتی نہیں۔ گاوں سے شہر تک نوجوان، ریلوے اور آرمی اور بھرتی کے لئے دن رات مصروف ہیں مگر مودی حکومت میں بھرتی اور امید دونوں ختم۔

تبصرہ کریں

Back to top button