نیرج چوپڑا کو امریکہ میں ورلڈ اتھلیٹک چمپئن شپ میں تاریخی میڈل متوقع

ورلڈ اتھیلیٹکس چمپئن شپ جس کا انعقاد امریکہ کے مقام یوجن میں جمعہ کے دن سے ہورہا ہے میں اس سیزن کے تاریخی میڈل پرقبضہ کرنے اولمپک جیولن چمپئن نیرج چوپڑا اپنے بہترین فارم اور کارکردگی کے تسلسل پر نظریں جمائے ہوئے ہیں۔

نئی دہلی: ورلڈ اتھیلیٹکس چمپئن شپ جس کا انعقاد امریکہ کے مقام یوجن میں جمعہ کے دن سے ہورہا ہے میں اس سیزن کے تاریخی میڈل پرقبضہ کرنے اولمپک جیولن چمپئن نیرج چوپڑا اپنے بہترین فارم اور کارکردگی کے تسلسل پر نظریں جمائے ہوئے ہیں۔

اسٹاکہوم میں 30 جون کو منعقدہ ڈائمنڈ لیگ کے دوران سیزن کے بہترین کوشش جس میں انہوں نے نیزہ 89.094 میٹر تک پھینکنے کی تیسری کوشش کرکے چوپڑا اس چمپئن شپ میں میڈل جیتنے کا پسندیدہ اتھلیٹ بن گیا ہے۔ ورلڈ چمپئن شپ میں حاصل ہونے والا میڈل چوپڑا کے لئے تاریخ کا ایک اور حصہ ہوگا۔

کیونکہ وہ ہندوستان کے دوسرے ٹریک اینڈ فیلڈ اتھلیٹ ہوجائیں گے اور عالمی چمپئن شپ میں ملک کے لئے میڈل جیتنے والے پہلے مرد اتھلیٹ بن جائیں گے۔ لانگ جمپ چمپئن انجو بابی چارج پیرس میں سال 2003 میں پہلی ہندوستانی چمپئن تھی جو ورلڈ چمپئن شپ میں کانسے کا طمغہ جیتی تھی۔

امریکی مقام چولہ وستا میں ٹریننگ مرکز سے ذرائع ابلاغ کے ساتھ آن لائن بات چیت کرتے ہوئے چوپڑا نے کہاکہ ان کی تیاری بہتر ہے اور ان کے اعتماد کی سطح بلند ہے۔ تین مقابلے جس میں انہوں نے حصہ لیا کے منجملہ دو میں ان کی شخصی کارکردگی بہتر تھی اور ایک میڈل جیتا تھا۔

تین کارکردگیوں میں انہوں نے تسلسل قائم رکھا۔ ورلڈ چمپئن شپ میں توقع ہے کہ وہ بہترین مظاہرہ کررہی ہے۔ وہ بہتر کارکردگی کرکے 90 میٹر سے آگے نیزہ پھینکیں گے۔ 14 جون کو فن لینڈ میں پاؤ نرمی گیمس میں نیزہ 89.94 میٹر تک پھینکنے سے پہلے انہوں نے 89.30 میٹر ریکارڈ درج کیاتھا جو 90 میٹر کے لئے صرف 6 سنٹی میٹر کم تھا۔

تبصرہ کریں

Back to top button