ورلڈاردو سمٹ کا افتتاح۔خان لطیف محمد خان ایوارڈ متعارف

ایڈیٹر ان چیف روزنامہ منصف ایم اے جلیل نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ 27مارچ1822کو اردو کا پہلا اخبار کلکتہ سے پنڈت سری دت نے جام جہاں نما شائع کیا تھا۔ سابق ایڈیٹر ان چیف روزنامہ منصف جناب خان لطیف محمد خان‘ سابق ایڈیٹر سیاست عابدعلی خان اور سابق ایڈیٹر رہنمائے دکن نے اردو صحافت کو فروغ دینے میں نمایاں خدمات انجام دی تھیں۔ اردو ادب اور صحافت میں ان کا نام عزت واحترام سے لیاجاتا ہے۔

حیدرآباد: ریاستی وزیرداخلہ محمد محمودعلی نے اولیائے طلبہ کو مشورہ دیاکہ وہ بچوں کو دنیاوی تعلیم کے ساتھ دینی تعلیم دلانے پر توجہ دیں۔

انہوں نے کہا کہ حکومت تلنگانہ کی جانب سے اقلیتی طلبہ کے لئے 204اقامتی اسکولس قائم کئے گئے ہیں ان اسکولوں میں طلبہ کو مفت معیاری تعلیم(دنیاوی اور دینی تعلیم)دی جارہی ہے۔

وزیرداخلہ محمد محمود علی نے آج اردوصحافت کے 200 سال مکمل ہونے پر جشن ورلڈ اردو سمٹ کا شمع جلا کر افتتاح کیا۔

پروگرام میں ایڈیٹران چیف روزنامہ منصف ایم اے جلیل‘ پروگرام کے ڈائرکٹر ڈاکٹر مختاراحمد فردین پروگرام کوآرڈنیٹر ایم اے ساجد، پروفیسر مسعود احمد پرنسپل میسکو کالج آف فارمیسی‘ شبیر علی شاہ قادری‘ سید افتخار(سابق ایڈیٹر سالار بنگلور، شوکت علی صوفی سینئر صحافی، محمد اظہرعلی مجاہد ڈائرکٹرذیمریس ہال‘ ڈاکٹر شیخ نعمان سابق صدرنشین اے پی اردواکیڈیمی‘عائشہ روبینہ سابق کارپوریٹر کے علاوہ دیگر نے بحیثیت مہمانانِ خصوصی شرکت کی۔

وزیرداخلہ محمد محمودعلی نے ایڈیٹر ان چیف روزنامہ منصف ایم اے جلیل کو اردو انمول ایوارڈ عطاکیاجبکہ انہوں نے خان لطیف محمد خان ایوارڈ‘روزنامہ منصف کے سینئر رپورٹرس محمد بشیرالدین اور محمدیحییٰ قادری کو پیش کیا۔

اس کے علاوہ انہوں نے اسماعیل ذبیح ایوارڈ‘کارنامہ حیات ایوارڈ ودیگرایوارڈز بھی صحافیوں کو عطا کئے۔ محمد محمود علی نے کہا کہ علٰحدہ تلنگانہ تحریک کی روزنامہ منصف کے سابق ایڈیٹر ان چیف جناب خان لطیف محمد خان مرحوم، دیگر اخبارات کے ایڈیٹرس نے مکمل تائید کی تھی۔

انہوں نے کہا کہ صحافت اہم پیشہ ہے، صحافی قلم کے ذریعہ انقلاب لاسکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اردو ہماری مادری زبان ہے ہم کو اپنے نونہالوں کو اردو میں تعلیم دلاناچاہئیے۔

انہوں نے کہا کہ متحدہ ریاست آندھراپردیش میں صرف 12 اقلیتی اقامتی اسکولس تھے ان میں 1200اقلیتی طلبہ تعلیم کرتے تھے تاہم ٹی آرایس کے دورحکومت میں 204 اقلیتی اقامتی اسکولس قائم کئے گئے ہیں۔ ان میں تقریباً ایک لاکھ 40ہزار طلبہ تعلیم حاصل کررہے ہیں۔ ان میں لڑکیوں کی تعداد59ہزار ہے۔ انہوں نے مسلمانوں کو تعلیم حاصل کرنے کا مشورہ دیا۔

ایڈیٹر ان چیف روزنامہ منصف ایم اے جلیل نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ 27مارچ1822کو اردو کا پہلا اخبار کلکتہ سے پنڈت سری دت نے جام جہاں نما شائع کیا تھا۔ سابق ایڈیٹر ان چیف روزنامہ منصف جناب خان لطیف محمد خان‘ سابق ایڈیٹر سیاست عابدعلی خان اور سابق ایڈیٹر رہنمائے دکن نے اردو صحافت کو فروغ دینے میں نمایاں خدمات انجام دی تھیں۔ اردو ادب اور صحافت میں ان کا نام عزت واحترام سے لیاجاتا ہے۔

ایگزیکیٹیو ایڈیٹر روزنامہ منصف اطہرمعین نے اپنی تقریر میں کہا کہ ادارہ منصف کی جانب سے آئندہ سال سے سابق ایڈیٹر ان چیف روزنامہ منصف جناب خان لطیف محمد خان کے نام سے ایوارڈ دینے کے اقدامات کئے جائیں گے۔

اس موقع پر کلچرل سکریٹری محسن خان، نصراللہ خان اور سید اصغرودیگر نے شرکت کی۔ اس پروگرام میں مختلف اسکولس اور کالجس کے نمائندوں کو بھی ایوارڈز عطا کئے گئے۔

تبصرہ کریں

Back to top button