ٹھاکرے خاندان کو الگ تھلگ کرنے کی کوشش ناکام: آدتیہ ٹھاکرے

ٹھاکرے نے 'نشٹھا یاترا' کے دوران لوگوں سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ملک دشمنوں کا اصلی چہرہ سامنے آ گیا ہے۔ انہوں نے ایکناتھ شنڈے- دیویندر فڈنویس حکومت پر ابھی تک کابینہ کی میٹنگ نہ ہونے پر تنقید کی۔

کولہاپور: شیو سینا کے لیڈر آدتیہ ٹھاکرے نے منگل کو شنڈے حکومت کو ہدف تنقید بناتے ہوئے کہا کہ ٹھاکرے خاندان کو الگ تھلگ کرنے کی سازش ناکام ہوگئی ہے، انتظامیہ کے نام پر لوگوں کو بیوقوف بنایا جا رہا ہے اور ابھی تک مہاراشٹر حکومت کی کابینہ (کابینہ) کی میٹنگ نہیں ہوئی ہے ۔

ٹھاکرے نے ‘نشٹھا یاترا’ کے دوران لوگوں سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ملک دشمنوں کا اصلی چہرہ سامنے آ گیا ہے۔ انہوں نے ایکناتھ شنڈے- دیویندر فڑنویس حکومت پر ابھی تک کابینہ کی میٹنگ نہ ہونے پر تنقید کی۔

انہوں نے کہاکہ ‘شنڈے-فڑنویس حکومت کی تشکیل کے 33 دن گزر چکے ہیں، لیکن انہیں ‘جمبو کابینہ’ بنانے کے لیے ابھی تک کوئی تیسرا شخص نہیں ملا ہے۔ انہوں (غداروں) نے شیوسینا کے سربراہ ادھو ٹھاکرے اور ان کے خاندان کے افراد کو الگ تھلگ کرنے کی سازش کی، لیکن مجھے یقین ہے کہ مہاراشٹر کے لوگ ہمیں الگ نہیں کریں گے۔

ٹھاکرے نے کہا کہ ’’غدار ہا غدار استو (غداری کے روپ میں غداری) اور اگر غداری جیسا رجحان شروع ہوا تو ہمارا ملک مکمل طور پر برباد ہو جائے گا۔ انہوں نے کہاکہ ’’نشٹھا یاترا کوئی سیاسی دورہ نہیں ہے لیکن ہمیں لوگوں کی محبت اور حمایت مل رہی ہے۔‘‘

یہ بھی پڑھیں

تبصرہ کریں

Back to top button