کاش مودی ڈرون کے ذریعہ ملک میں لگی نفرت آگ پر بھی نظر رکھ لیتے: کانگریس

کانگریس نے اپنے آفیشل ٹویٹر ہینڈل پر مودی پر طنزیہ حملہ کیا اور پوچھا کہ ان کے ڈرون ملک کی بڑھتی ہوئی مہنگائی اور بگڑتی ہوئی معیشت کی تباہی کو کیوں نہیں دیکھ رہے ہیں۔

نئی دہلی: کانگریس نے وزیر اعظم نریندر مودی کے ڈرون سے کیدارناتھ میں تعمیراتی کاموں پر نظر رکھنے سے متعلق بیان پر ہفتہ کے روز طنز کرتے ہوئے کہا کہ کاش مودی کے ڈرون سرحد پر چینی تجاوزات، ملک میں لگی نفرت کی آگ ، مہنگائی، گجرات کی بندرگاہ پر منشیات کی آنے والی کھیپ پر نظر رکھتے تو ملک میں خوشحالی کی نئی فضا پیدا ہوتی۔

کانگریس نے اپنے آفیشل ٹویٹر ہینڈل پر مودی پر طنزیہ حملہ کیا اور پوچھا کہ ان کے ڈرون ملک کی بڑھتی ہوئی مہنگائی اور بگڑتی ہوئی معیشت کی تباہی کو کیوں نہیں دیکھ رہے ہیں۔ پارٹی نے کہا کہ مہنگائی، معاشی تباہی اور رکتی کمائی مودی جی، آپ کا ڈرون کو نظر نہیں آئی۔ ملک جواب چاہتا ہے اور اس معاشی تباہی کا جواب دینا ہی ہوگا۔

پارٹی نے سرحد پر چینی تجاوزات پر ڈرون کے بہانے مسٹر مودی پر بھی حملہ کرتے ہوئے کہا لوگ مودی جی سے پوچھ رہے ہیں کہ وہ اروناچل پردیش کے دو غیر قانونی چینی گاؤں میں ڈرون کب بھیجیں گے‘‘۔ پارٹی نے کل بھی شرح سے متعلق بیان آنے کے بعد چین کی سرحد پر ڈرون سے نگرانی نہ کرنے پر مسٹر مودی پر حملہ کیا تھا۔

کانگریس نے مودی سے ایران اور افغانستان سے گجرات کی بندرگاہوں پر منشیات کی مسلسل کھیپ کے بارے میں بھی سوال پوچھتے ہوئے ٹویٹ کیا ’’کاش مودی جی گجرات کی بندرگاہوں پر منشیات کی سینکڑوں کھیپ آتے دیکھ سکتے، تو ہمارے ملک کے نوجوان منشیات کی لت سے بچ سکتے۔ ملک جواب چاہتا ہے، مودی جی، آپ کے ڈرون ملک میں بڑی مقدار میں منشیات آتے کیوں نہیں دیکھ سکتے؟

تبصرہ کریں

Back to top button