کینڈا میں ویکسین مخالف ڈرائیوروں کا احتجاج

اخبار دی ویک کے مطابق جسٹن ٹروڈو نے خفیہ مقام پر منتقل ہونے کا فیصلہ اس وقت کیا جب ہزاروں مظاہرین کینیڈا کے دارالحکومت اوٹاوا میں داخل ہو گئے۔

کینڈا: امریکہ اور کینیڈا کی سرحد سے گزرنے والے ٹرک ڈرائیورز کے لیے ویکسین لازمی قرار دینے کے خلاف احتجاج کے بعد کینیڈا کے وزیراعظم جسٹن ٹروڈو اپنے خاندان سمیت دارالحکومت میں واقع اپنا گھر چھوڑ کر خفیہ مقام پر منتقل ہو گئے ہیں۔

اخبار دی ویک کے مطابق جسٹن ٹروڈو نے خفیہ مقام پر منتقل ہونے کا فیصلہ اس وقت کیا جب ہزاروں مظاہرین کینیڈا کے دارالحکومت اوٹاوا میں داخل ہو گئے۔

برطانوی خبر رساں ادارے روئٹرز کے مطابق ’فریڈیم کانوائے‘ کے نام سے ہونے والے اس احتجاج کے تحت لگ بھگ 27 سو ٹرک ہفتے کو کینیڈا کے دارالحکومت میں داخل ہو گئے تھے۔

اس کانوائے میں شامل ٹرک ہر سمت سے شہر میں داخل ہوئے اور انہوں نے امریکہ اور کینیڈا کی سرحد سے گزرنے والے ٹرک ڈرائیوروں کے لیے ویکسین کو لازمی قرار دینے کے فیصلے کے خلاف احتجاج کیا۔

اوٹاوا کی پولیس کے سربراہ نے کہا کہ ’یہ مظاہرے پورے ملک کی سطح پر ہیں اور اپنے حجم میں کافی بڑے ہیں۔

تبصرہ کریں

Back to top button