ہندوستان کے اقدام کے بارے میں پاکستان کی ٹویٹر سے شکایت

پی ٹی اے نے اسے جانبدارانہ طورپر معلومات کو دبایا جانا قراردیا ہے اور ٹویٹر انتظامیہ سے اپیل کی ہے کہ وہ اپنے فیصلہ پر نظرثانی کرتے ہوئے پاکستانی اکاؤنٹس کے ہندوستان میں مشاہدہ کو بحال کرے۔

اسلام آباد: ہندوستان کی طرف سے ٹویٹر مینجمنٹ کے ساتھ مل کر پاکستانی مشنس کے سرکاری اکاؤنٹس کو مسدود کرنے کا مسئلہ پاکستان ٹیلی کمیونیکیشنس اتھاریٹی (پی ٹی اے) نے اٹھایا ہے اور ان کی بحالی کا مطالبہ کیا ہے۔

اس کے علاوہ دفتر خارجہ نے پاکستانی مشنس کے اکاؤنٹس کو اپنے حدود میں مسدود کردینے پر ہندوستان کی مذمت بھی کی ہے۔ پی ٹی اے نے اسے جانبدارانہ طورپر معلومات کو دبایا جانا قراردیا ہے اور ٹویٹر انتظامیہ سے اپیل کی ہے کہ وہ اپنے فیصلہ پر نظرثانی کرتے ہوئے پاکستانی اکاؤنٹس کے ہندوستان میں مشاہدہ کو بحال کرے۔

 پی ٹی اے کے ایک سینئر عہدیدار نے بتایا کہ ٹویٹر سے کہا گیا ہے کہ وہ ہندوستانی علاقہ میں پاکستان کے سرکاری اکاؤنٹس کو مسدود کرنے کی تفصیلات بھی فراہم کرے۔ ٹویٹر کے ساتھ بات چیت معلومات کے بہاؤ سے متعلق بنیادی حقوق پر مبنی تھی۔

 ہمیں یہ جاننے کی ضرورت ہے کہ کس بنیاد پر ان اکاؤنٹس کو مسدود کیا گیا ہے۔ ہمیں کم ازکم اتنا تو بتایا جائے کہ ان اکاؤنٹس نے کیا خلاف ورزی کی ہے تاکہ ہم ان غلطیوں کا اعادہ نہ کریں۔

تبصرہ کریں

Back to top button