یوپی میں نئے دینی مدرسوں کو سرکاری گرانٹ نہیں ملے گی

چند دن قبل بی جے پی زیراقتدار ریاست کے تمام دینی مدرسوں میں قومی ترانہ لازمی قراردیا گیا تھا۔ فیصلہ کی وجہ دریافت کرنے پر انصاری نے کہا کہ فی الحال ریاست میں 560 مدرسوں کو سرکاری گرانٹ مل رہی ہے۔

لکھنو: حکومت اترپردیش کسی بھی نئے مدرسہ کو گرانٹ نہیں دے گی۔ ریاستی کابینہ نے یہ فیصلہ کیا۔ اترپردیش کے مملکتی وزیر بہبود اقلیت دانش آزاد انصاری نے چہارشنبہ کے دن پی ٹی آئی سے کہا کہ ایک دن قبل چیف منسٹر کی زیرصدارت کابینی اجلاس میں یہ فیصلہ کیا گیا۔

 انہوں نے کہا کہ جن دینی مدارس کو فی الحال حکومت سے گرانٹ مل رہی ہے وہ ملتی رہے گی لیکن فہرست میں نئے مدرسوں کا اضافہ نہیں ہوگا۔ چند دن قبل بی جے پی زیراقتدار ریاست کے تمام دینی مدرسوں میں قومی ترانہ لازمی قراردیا گیا تھا۔ فیصلہ کی وجہ دریافت کرنے پر انصاری نے کہا کہ فی الحال ریاست میں 560 مدرسوں کو سرکاری گرانٹ مل رہی ہے۔

 یہ بہت بڑی تعداد ہے۔ حکومت کی توجہ دینی مدرسوں میں معیاری تعلیم فراہم کرنے پر مرکوز ہے اسی لئے فہرست میں نئے مدرسے نہیں جوڑے جائیں گے۔ یوپی میں جملہ 16461 دینی مدرسے ہیں جن میں 560 کو حکومت سے گرانٹ ملتی ہے۔

تبصرہ کریں

Back to top button