ایلن مسک کے ٹویٹر خریدنے کےبعد جو بائیڈن فکرمند: پریس سکریٹری

وائٹ ہاؤس کے پریس سکریٹری ساکی نے کہا کہ میں اس خصوصی لین دین پر تبصرہ نہیں کرنے جارہی ہوں۔ میں آپ کو بتا سکتی ہوں کہ ٹویٹر کا مالک چاہے کوئی بھی ہو،صدر لمبے وقت سے سوشل میڈیا پلیٹ فارم کی طاقت کے بارے میں فکرمند ہیں۔

واشنگٹن: امریکی صدر جو بائیڈن سوشل میڈیا پلیٹ فارم ٹویٹر کے سلسلے میں کافی فکر مند ہیں۔یہ معلومات وائٹ ہاؤس کے پریس سکریٹری نے دی۔ ٹویٹر نے پیر کو جاری ایک بیان میں کہا کہ ارب پتی کاروباری ایلن مسک نے ٹویٹر کو تقریباً 44 ارب ڈالر میں خریدنے کا سودا کیا ہے۔جس کے بعد نیویارک شیئر بازار سے سوشل میڈیا کی بڑی کمپنیاں ہٹ جائیں گی اور یہ ایک نجی کمپنی بن جائے گی۔

وائٹ ہاؤس کے پریس سکریٹری ساکی نے کہا،’’میں اس خصوصی لین دین پر تبصرہ نہیں کرنے جارہی ہوں۔میں آپ کو بتا سکتی ہوں کہ ٹویٹر کا مالک چاہے کوئی بھی ہو،صدر لمبے وقت سے سوشل میڈیا پلیٹ فارم کی طاقت کے بارے میں فکرمند ہیں۔‘‘

انہوں نے کہا کہ بائڈن اجارہ داری مخالف تجارتی اصلاحات کے سخت حامی رہے ہیں،جنہیں بڑے میڈیا پلیٹ فارمز سے زیادہ شفافیت کی ضرورت ہوگی۔ واضح رہے کہ مسٹر مسک نے اس سے پہلے تین ارب ڈالر میں ٹویٹر میں 9.1 فیصدحصہ داری خریدی تھی۔

یہ بھی پڑھیں
ذریعہ
یواین آئی

تبصرہ کریں

Back to top button