بحرین میں عرب دنیا کے سب سے بڑے گرجا گھر کا افتتاح

مذہبی تکسریت پر بحرین کو فخر ہے اور مدت طویل سے وہ عیسائی اور غیر عیسائی مذہب کے لوگوں کے لیے عبادت گاہیں فراہم کرتارہاہے اور کھلے اور آزادانہ طور پر انہیں اپنے مذہب کی آزادی بھی دی ہے۔

لندن: بحرین میں خلیج کے سب سے بڑے گرجا گھر کاافتتاح کیاگیا جبکہ تقریب میں ملک کی حکومت کے ارکان اور ویٹیکن کے پوپ کے وفد کے علاوہ بحرین کے عیسائیوں نے بھی شرکت کی۔

سال 2014 میں Our Lady Arabia Cathedral کی تعمیر کا آغاز ہوا اور پوپ فرانسس کی جانب سے فراہم کردہ سنگ بنیاد رکھاگیا۔ بحرین کے دارالحکومت منامہ کے باہر تقریباً 15 میل فاصلہ پر واقع ہے اور اس میں 2300 افراد دعائیہ اجتماع میں شرکت کرسکتے ہیں۔

 مذہبی تکثیریت پر بحرین کو فخر ہے اور مدت طویل سے وہ عیسائی اور غیر عیسائی مذہب کے لوگوں کے لیے عبادت گاہیں فراہم کرتارہاہے اور کھلے اور آزادانہ طور پر انہیں اپنے مذہب کی آزادی بھی دی ہے۔ کیتھڈرل آف آر لیڈی آف عربیہ نامی یہ چرچ بحرین میں تعمیر کیا گیا ہے۔

بحرین کے رہایشی اور چرچ کے پادری شربل فیاض کا کہنا ہے کہ ہم اس چرچ کے لیے بہت خوش ہیں۔

اس چرچ میں 2300 افراد کی جگہ ہے۔ بحرین میں 80ہزار کیتھولک عیسائی موجود ہیں، جن میں سے زیادہ تر ایشیائی ممالک‘بھارت اور فلپائن سے تعلق رکھتے ہیں۔

اس چرچ کی تعمیر کے لیے شاہِ بحرین نے زمین فراہم کی تھی۔ خیال رہے کہ خلیج کے خطے میں بین المذاہب ہم آہنگی کے نام پر غیرمسلموں کی عبادت گاہوں کی تعمیر تیزی سے جاری ہے۔

ذریعہ
منصف ویب ڈیسک

تبصرہ کریں

Back to top button