تلنگانہ میں شیطانی راج: رینوکا چودھری

حیدرآباد: سابق مرکزی وزیر رینوکا چودھری نے کہا ہے کہ تلنگانہ میں شیطانی راج چل رہا ہے۔ یہ شیطانی راج اغوا، قتل، اور لینڈ گرابنگ کا مرکز بن گیا ہے۔

دھرانی پورٹل سے فائدہ کم اور نقصان زیادہ ہورہا ہے۔ ہزاروں کسان ان سے، دھرانی پورٹل کی ہیرا پھیری کی شکایت کررہے ہیں۔ کافی عرصہ پہلے فروخت کردہ اراضیات اب بھی سابق مالکین کے نام پر درج ہیں۔

دھرانی پورٹل کی بدعنوانیوں اور غلطیوں کی وجہ سے ایک نیا لینڈ مافیا تیار ہورہا ہے جو ان غلطیوں کا فائدہ اٹھانا چاہتا ہے۔ رینوکا چودھری گاندھی بھون میں پریس کانفرنس سے خطاب کررہی تھیں۔

انہوں نے سوال کیا کہ تلنگانہ اسٹارٹ اپ کا مطلب یہی ہے کیا؟۔ جس میں رئیل اسٹیٹ تاجرین کا اغواء اور قتل کیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ جدید ٹکنالوجی کا استعمال کوئی غلط بات نہیں ہے۔

اس سے قبل بھی انٹر میڈیٹ کے جوابی بیاضوں کی جانچ میں غلطیوں کا نتائج پر اثر پڑا تھا۔ انہوں نے سوال کیا کہ آخر حکام کیا کررہے ہیں؟ آندھرا کی راجدھانی امراوتی میں حصول اراضی کے مقدمہ میں آج عدالت کا کسانوں کے حق میں فیصلہ کا خیر مقدم کرتے ہوئے انہوں نے چودھری نے کہا کہ یہ انصاف کی جیت ہے۔

کسانوں کی جدوجہد بالخصوص خواتین نے اہم رول ادا کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اگر آندھرا کی حکومت اس فیصلہ کے خلاف اپیل کرنے جارہی ہے تو ہم کسانوں کی تائید میں اپیل کریں گے۔

Back to top button