تیونس میں سینکڑوں ٹن ایندھن لے جانے والا بحری جہاز غرق

مصر سے مالٹا 750 ٹن ایندھن لے جانے والا بحری جہاز تیونس کے جنوب مشرقی ساحل پر ڈوب گیا۔عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق زیلو نامی بحری جہاز مصر سے مالٹا سیکڑوں ٹن ایندھن لے کر روانہ ہوا تھا۔

تیونس سٹی: مصر سے مالٹا 750 ٹن ایندھن لے جانے والا بحری جہاز تیونس کے جنوب مشرقی ساحل پر ڈوب گیا۔عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق زیلو نامی بحری جہاز مصر سے مالٹا سیکڑوں ٹن ایندھن لے کر روانہ ہوا تھا۔

تیونس کے ساحل پر بحری جہاز کو انتہائی خراب موسم کا سامنا کرنا پڑا جس پر عملے نے تیونس کے حکام سے ان کی سمندری حدود میں داخلے کی اجازت مانگی تھی۔

بحری جہاز کو اجازت تو مل گئی تاہم خلیج قابس میں ہی جہاز میں پانی داخل ہونا شروع ہو گیا تھا اور اس کا انجن روم بھی پانی سے بھر گیا تھا اور جہاز تیزی سے ڈوبنے لگا۔

خطرے کو بھانپتے ہوئے تیونسی کوسٹ گارڈ نے جہاز کے عملے کو دوسری کشتی میں سوار کرا کر محفوظ مقام پر پہنچا دیا۔

تیونس کے کوسٹ گارڈ کے افسر نے میڈیا کو بتایا کہ اب تک ڈوبنے والے بحری جہاز سے ایندھن کے اخراج کی کوئی اطلاع نہیں ملی۔

تبصرہ کریں

Back to top button