ججوں کی تقرری میں سماجی انصاف کو یقینی بنایا جائے: ایم کے اسٹالن

اسٹالن نے کہا کہ جیسا کہ ہم سب جانتے ہیں، جنوبی خطے کی ریاستوں میں ٹاملناڈو کا ایک اہم مقام ہے اور ان ریاستوں کو جنوبی ہند کے لوگوں کی ضروریات کو پورا کرنے اور انصاف حاصل کرنے کے لیے نئی دہلی جانا پڑتا ہے۔

چینائی: ٹاملناڈو کے چیف منسٹر ایم کے اسٹالن نے ہفتہ کے روز چیف جسٹس این وی رمنا سے سپریم کورٹ اور ہائی کورٹ کے ججوں کی تقرری میں سماجی انصاف کے اصول پر عمل کرنے کی درخواست کی۔  چیف جسٹس کے ہاتھوں 20.24 کروڑ روپے کی لاگت سے ہائی کورٹ کے نو منزلہ انتظامی بلاک کا سنگ بنیاد رکھنے اور پھر شہر میں کمرشل کورٹ کمپلیکس کا افتتاح کرنے کے بعد، اسٹالن نے کہا کہ سپریم کورٹ اور ہائی کورٹ کے ججوں کی تقرری کے لیے قائم کالجیم براہ کرم اس بات کو یقینی بنائیں کہ تقرری میں سماجی انصاف کے اصول کے ساتھ ساتھ دیگر پیرامیٹرز پر عمل کیا جائے۔

انہوں نے کہا کہ مجھے یقین ہے کہ اس طرح اعلیٰ عدلیہ میں سب کی شمولیت کو یقینی بنایا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ دوسری درخواست چنئی میں سپریم کورٹ کی بنچ کے قیام سے متعلق ہے۔ اسٹالن نے کہا کہ “جیسا کہ ہم سب جانتے ہیں، جنوبی خطے کی ریاستوں میں ٹاملناڈو کا ایک اہم مقام ہے اور ان ریاستوں کو جنوبی ہند کے لوگوں کی ضروریات کو پورا کرنے اور انصاف حاصل کرنے کے لیے نئی دہلی جانا پڑتا ہے۔ میں اس موقع پر چینائی میں سپریم کورٹ کی بنچ کے قیام کے لیے طویل عرصے سے زیر التواء درخواست کا ذکر کرنا چاہوں گا۔

چیف منسٹر نے کہا کہ تیسری درخواست یہ ہے کہ مدراس ہائی کورٹ میں ٹامل زبان کو سرکاری زبان کے طور پر استعمال کی اجازت دی جائے۔ انہوں نے کہاکہ پہلے سے ہی چار ریاستیں – راجستھان، اتر پردیش، بہار اور مدھیہ پردیش – اپنے متعلقہ ہائی کورٹ میں ریاست کی سرکاری زبان استعمال کر رہی ہیں۔ یہ ریاست کے لوگوں اور قانونی برادری کا ایک طویل مدتی مطالبہ ہے ۔

انہوں نے کہا، ’’میں ریاست کے لوگوں کی جانب سے ان درخواستوں کو پیش کرنے کے اس سنہری موقع سے فائدہ اٹھانا چاہتا ہوں اور مجھے یقین ہے کہ آپ یقینی طور پر ان سب کے بارے میں مثبت رائے پیش کریں گے۔ اسٹالن نے کہا کہ ہندوستان میں ایک بہترین عدالتی نظام ہے جس کی سربراہی ملک کے چیف جسٹس کرتے ہیں۔ آئین کے نگہبان کے طور پر، ہندوستانی عدالتی نظام نے بہت اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کیا ہے۔

ذریعہ
یواین آئی

تبصرہ کریں

Back to top button