جواہر لال نہرو اور محمد علی جناح نے ٹھیک فیصلہ کیا: سجن سنگھ ورما

کانگریس کے رکن اسمبلی و مدھیہ پردیش کے سابق کابینی وزیر سجن سنگھ ورما نے دعویٰ کیا کہ سابق وزیر اعظم جواہر لال نہرو اور محمد علی جناح نے ایک دانش مندانہ اقدام میں ملک تقسیم کیا۔

اگرمالوا (ایم پی): کانگریس کے رکن اسمبلی و مدھیہ پردیش کے سابق کابینی وزیر سجن سنگھ ورما نے دعویٰ کیا کہ سابق وزیر اعظم جواہر لال نہرو اور محمد علی جناح نے ایک دانش مندانہ اقدام میں ملک تقسیم کیا۔

کانگریس لیڈر نے جناح کو ایک مجاہد آزادی قرار دیا اور کہا کہ انہوں نے ملک تقسیم کرتے ہوئے ٹھیک کام کیا۔ سابق کابینی وزیر کے یہ ریمارکس اُس وقت سامنے آئے جب وہ چہارشنبہ کے دن میڈیا سے خطاب کررہے تھے۔

انہوں نے کہاکہ نہرو اور جناح کی جانب سے ملک کی تقسیم ایک دانش مندانہ اقدام تھا، جناح ایک مجاہد آزادی تھے اور یہ یاد رکھا جانا چاہیے۔ انہوں نے ملک توڑا نہیں بلکہ ایک صحیح کام کیا، کیا وہ مجاہد آزادی نہیں تھے؟

ورما نے مدھیہ پردیش اور مرکز میں حکمران بی جے پی پر تنقید کرتے ہوئے پوچھا کہ آیا مجاہد آزادی کی تشریح اس لئے تبدیل ہوجاتی ہے کیونکہ اِن میں سے ایک مسلم ہے۔

بی جے پی اِس کلچر کو پروان چڑھا رہی ہے۔ وزیر اعظم نریندر مودی نے 26 / جنوری کو اپنی تقریر میں کہا تھا کہ جواہر لال نہرو اور جناح 1947ء میں ملک کی تقسیم کے لئے ذمہ دار ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ملک کو دونوں قائدین کا شکریہ ادا کرنا چاہیے کیوں کہ انہوں نے ملک کو 2 حصوں میں تقسیم کرتے ہوئے دانش مندانہ اقدام کیا ہے۔

کانگریس لیڈر نے آر ایس ایس کے سربراہ موہن بھاگوت اور وزیر اعظم نریندر مودی پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ اگر جناح نے ملک تقسیم نہ کیا ہوا تھا تو آج وہ جن عہدوں پر فائز ہیں، وہ اُن پر نہ ہوتے۔

تبصرہ کریں

Back to top button