حیدرآباد میں جمعہ پرامن گزر گیا، پرانے شہر میں حالات پرسکون

پرانا شہر میں آج جمعہ کے پیش نظر حالات پر امن اور معمول کے مطابق رہے، کوئی ناخوشگوار واقعہ پیش نہیں آیا۔ مساجد میں فرزندان توحید کی کثیر تعداد نے نماز جمعہ ادا کی۔

حیدرآباد: پرانا شہر میں آج جمعہ کے پیش نظر حالات پر امن اور معمول کے مطابق رہے، کوئی ناخوشگوار واقعہ پیش نہیں آیا۔ مساجد میں فرزندان توحید کی کثیر تعداد نے نماز جمعہ ادا کی۔

نماز جمعہ کا سب سے بڑا اجتماع تاریخی مکہ مسجد میں دیکھا گیا۔ جہاں ہزاروں فرزندان توحید نے نماز جمعہ ادا کی۔ خطیب مکہ مسجد حافظ وقاری مولانا محمد رضوان قریشی نے امامت کی۔

قبل ازیں اپنے خطبہ میں انہوں نے عامتہ المسلمین کو تلقین کی ہے کہ وہ موجودہ حالات میں صبر وتحمل کا مظاہرہ کریں۔ موجودہ حالات سے رنجیدہ وغمزدہ نہ ہوں۔

اللہ اور رسول ؐ کی ہدایت اور اطاعت پر کاربند رہیں۔خرافات اور لہو ولعاب کی سرگرمیوں سے دور رہیں۔ نمازوں کی ادائیگی اور اطاعت رسولؐ میں ہی ہم سب کی کامیابی وسربلندی ہے۔ مولانا نے مسجد اقصیٰ وفلسطین کی باز یابی اور ملک وریاست میں امن وآمان اور ترقی و خوشحالی کیلئے دعا کی۔

نماز کے بعد مصلی پرامن طور پر واپس ہوگئے۔ سپرنٹنڈنٹ مکہ مسجد عبدالقدیر صدیقی کی نگرانی میں انتظامات کئے گئے تھے۔ مکہ مسجد کے روبرو اور چارمینار کے اطراف سیکوریٹی کا سخت بندوبست کیا گیا تھا۔

احتیاطی تدابیر اختیار کرتے ہوئے ریاپڈ ایکشن فورس کی بھاری تعداد کو متعین کیا گیا۔ شہر کی دیگر مساجد اور مختلف حساس علاقوں میں پولیس کا وسیع تر بندوبست کیا گیا تھا۔ مجموعی طور پر شہر میں حالات پر امن رہے۔ نماز کے بعد حسب معمول تمام بازار کھول دئیے گئے۔ اور سڑکوں پر چہل پہل شروع ہوگئی۔

تبصرہ کریں

Back to top button