غروب آفتاب کے بعد بھی پوسٹ مارٹم کے اقدامات

قتل عام، خودکشی، عصمت ریزی، مسخ شدہ اور مشتبہ نعشوں کا رات کے اوقات میں پوسٹ مارٹم نہیں کیا جائے گا۔

حیدرآباد: مرکزی وزارت طب، صحت اور بہبود خاندان کی جانب سے جاری کردہ پروٹوکول کے بعد حکومت تلنگانہ نے بھی ریاست کے تمام ٹیچنگ ہاسپٹلس کے پرنسپالس اور سرکاری دواخانوں کے سپرنٹنڈنٹس کو غروب آفتاب کے بعد بھی سرکاری دواخانوں میں پوسٹ مارٹم کرنے کا حکم دیا ہے۔

اس عمل سے متوفی، کے افراد خاندان کو سہولت کے ساتھ اعضاء کا عطیہ دینے کو فروغ دینے اور طریقہ کار کی تکمیل کے بعد مقررہ وقت میں عطیہ کردہ اعضا کو ضرورت مند مریض کے حوالے کرنے میں بھی مدد ملے گی۔

ڈائرکٹر میڈیکل ایجوکیشن تلنگانہ ڈاکٹر کے رمیش ریڈی نے کہا کہ ریاست کے تمام سرکاری دواخانوں میں انفرااسٹرکچر کی موجودگی اور دیگر امور کا جائزہ لیا جائے گا تاکہ ثبوت کے قدر میں کوئی کمی نہ رہنے پائے۔

پرنسپالس اور سپرنٹنڈنٹس، غروب آفتاب کے بعد سرکاری دواخانوں میں پوسٹ مارٹم کیلئے ضروری انتظامات کریں گے۔

رات کے اوقات میں کئے جانے والے پوسٹ مارٹم کی ویڈیو گرافی کو یقینی بنایا جائے گا۔تاکہ پوسٹ مارٹم کے معاملہ پر کوئی شک وشبہ نہ رہے تاہم انہوں نے وضاحت کی کہ قتل عام، خودکشی، عصمت ریزی، مسخ شدہ اور مشتبہ نعشوں کا رات کے اوقات میں پوسٹ مارٹم نہیں کیا جائے گا۔

ذریعہ
منصف نیوز بیورو

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.