سدی پیٹ کے کلکٹر پر ہائی کورٹ کی برہمی

ہائی کورٹ نے سوال کیا کہ کلکٹر کس طرح کسانوں کو ایسے احکامات دے سکتے ہیں۔ ہائی کورٹ نے کلکٹر کے رویہ پر ناراضگی ظاہر کی۔ ہائی کورٹ نے کہا کہ اس کیس میں فوجداری مواد موجود ہے۔

حیدرآباد: تلنگانہ ہائی کورٹ نے کسانوں کو دھان کے بیج فروخت  نہ کرنے سدی پیٹ کلکٹر کے زبانی احکام کے خلاف درخواست کی سماعت کرتے ہوئے کلکٹر پر برہمی ظاہر کرتے ہوئے سوال کیا کہ کیا دھان کے بیجوں کی فروخت امتناعی قانون میں شامل ہے۔ درخواست گزار نے اپنی درخواست میں کہا کہ سدی پیٹ کلکٹر نے بیج فروخت کنندگان کو ہدایت دی کہ وہ چاول کے بیج کسانوں کو فروخت نہ کریں۔

درخواست گزار نے ہائی کورٹ سے اس پر کارروائی کرنے کی درخواست کی۔ درخواست گزار نے اپنی درخواست میں سدی پیٹ کے کلکٹر، حکومت تلنگانہ، سدی پیٹ زرعی عہدیدار  اور منڈل زرعی عہدیدار کو فریق بنایا۔ ایڈوکیٹ جنرل بی ایس پرساد نے ہائی کورٹ کو بتایا کہ اس طرح کے کوئی احکام جاری نہیں کیے گئے اور تیقن دیا کہ حکومت اس طرح کے احکام جاری نہیں کرے گی۔

 ہائی کورٹ نے سوال کیا کہ کلکٹر کس طرح کسانوں کو ایسے احکامات دے سکتے ہیں۔ ہائی کورٹ نے کلکٹر کے رویہ پر ناراضگی ظاہر کی۔ ہائی کورٹ نے کہا کہ اس کیس میں فوجداری مواد موجود ہے۔

ذریعہ
منصف نیوز بیورو

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.