بمبئی ہائیکورٹ نے انیل دیشمکھ کو 12 نومبر تک ای ڈی تحویل میں دے دیا

ای ڈی نے اپنی درخواست میں خصوصی عدالت سے کہا تھا کہ دیشمکھ کو عدالتی تحویل میں ریمانڈ کرنے سے ایجنسی کو مناسب زیادہ تحفظات کا موقع نہیں ملے گا۔

ممبئی: بمبئی ہائیکورٹ نے اتوار کو خصوصی عدالت کے حکم کو جس میں مہاراشٹرا کے سابق وزیر داخلہ انیل دیشمکھ کو عدالتی تحویل میں دیاتھا نظرانداز کرتے ہوئے انہیں ای ڈی تحویل میں 12 نومبر تک منی لانڈرنگ کیس میں دے دیا۔

ای ڈی نے اپنی درخواست میں خصوصی عدالت سے کہا تھا کہ دیشمکھ کو عدالتی تحویل میں ریمانڈ کرنے سے ایجنسی کو مناسب زیادہ تحفظات کا موقع نہیں ملے گا۔ جس سے وسیع ترناخوشگوار سلسلہ شروع ہوسکتا ہے۔

ایجنسی نے کہا کہ وہ دیشمکھ صرف5یوم تک پوچھ گچھ کرے جن میں دیوالی کی وجہ سے دو یوم تعطیلات میں گذرے ایک ایکشن بنچ جسٹس مادھوجمعدار ای ڈی کی درخواست پر سماعت کررہی ہے جس میں خصوصی عدالت کے حکم کو چیالنج کیاگیا ہے جسے 6نومبر تک ریمانڈ 14یوم تک عدالتی تحویل میں خراب قانون اور فطری انصاف کے اصولوں کے خلاف ہے۔

ایڈیشنل سالیسیٹرجنرل انیل سنگھ ای ڈی کی پیروی کرتے ہوئے عدالت کو بتایاکہ اسی بنیاد پر جانچ کی گئی ہے‘ تحویلی پوچھ گچھ یا تفتیش کی اب ضرورت ہے جو 100کروڑ روپئے کی وصولی سے متعلق ہے۔

متعلقہ
ذریعہ
پی ٹی آئی

تبصرہ کریں

Back to top button

Adblocker Detected

Please turn off your Adblocker to continue using our service.