دفاع، توانائی، اختراع میں تعاون بڑھائیں گے ہندوستان اور برطانیہ، بورس جانسن کی مودی سے ملاقات

احمد آباد میں سابرمتی آشرم سے برطانوی وزیر اعظم کے دورہ کے آغاز کی تعریف کرتے ہوئے مودی نے کہا کہ ہندوستان کے یوم آزادی کے تہوار کے دوران وزیر اعظم بورس جانسن کا یہاں دورہ اپنے آپ میں ایک تاریخی لمحہ ہے۔

نئی دہلی: اپنی مجموعی اسٹریٹجک شراکت داری کو بڑھاتے ہوئے ہندوستان اور برطانیہ نے آج دفاعی پیداوار اور توانائی کے شعبے میں تعاون کو وسعت دینے کے ساتھ ساتھ اس سال کے آخر تک آزاد تجارتی معاہدہ (ایف ٹی اے) تک پہنچنے کا فیصلہ کیا۔ وزیر اعظم نریندر مودی اور ہندوستان کے دورہ پرآئے برطانوی وزیر اعظم بورس جانسن نے یہ فیصلے آج یہاں حیدرآباد ہاؤس میں تقریباً دو گھنٹے تک جاری رہنے والی وفود کی سطح کی دو طرفہ سربراہی میٹنگ میں لیے۔ دونوں ممالک کے درمیان جوہری توانائی اور اختراع کے شعبے میں دو معاہدوں پر بھی دستخط ہوئے۔

بعد ازاں دونوں وزرائے اعظم نے ایک پریس بیان میں ایک دوسرے کے ساتھ غیر رسمی قریبی دوستی کا اظہار بھی کیا۔ برطانوی وزیر اعظم کا خیرمقدم کرتے ہوئے مودی نے کہا کہ جانسن کا بطور وزیر اعظم ہندوستان کا ان کا پہلا دورہ ہوسکتا ہے لیکن ایک پرانے دوست کی حیثیت سے وہ ہندوستان کو اچھی طرح جانتے اور سمجھتے ہیں۔ انہوں نے گزشتہ برسوں میں ہندوستان-برطانیہ تعلقات کو مضبوط بنانے میں اہم کردار ادا کیا ہے۔

احمد آباد میں سابرمتی آشرم سے برطانوی وزیر اعظم کے دورہ کے آغاز کی تعریف کرتے ہوئے مودی نے کہا کہ ہندوستان کے یوم آزادی کے تہوار کے دوران وزیر اعظم بورس جانسن کا یہاں دورہ اپنے آپ میں ایک تاریخی لمحہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ گزشتہ سال ہم نے دونوں ممالک کے درمیان ایک جامع اسٹریٹجک شراکت داری قائم کی تھی۔ اور ہم نے اس دہائی میں اپنے تعلقات کی رہنمائی کے لیے ایک پرجوش’روڈ میپ 2030‘بھی شروع کیا۔

 آج کی اپنی گفتگو میں ہم نے اس روڈ میاپ میں ہونے والی پیشرفت کا بھی جائزہ لیا، اور مستقبل کے لیے کچھ اہداف بھی طے کیے ہیں۔ وزیراعظم نے کہا کہ دونوں ممالک کی ٹیمیں آزاد تجارتی معاہدے کے موضوع پر کام کر رہی ہیں۔ مذاکرات میں اچھی پیش رفت ہو رہی ہے۔ اور ہم نے اس سال کے آخر تک ایف ٹی اے کو بند کرنے کی پوری کوشش کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ ہندوستان نے پچھلے چند مہینوں میں متحدہ عرب امارات اور آسٹریلیا کے ساتھ ایف ٹی اے کا خاتمہکیا ہے۔ اسی رفتار اور عزم کے ساتھ ہم برطانیہ کے ساتھ بھی ایف ٹی اے کے ساتھ آگے بڑھنا چاہیں گے۔

مودی نے کہا کہ ہم نے دفاعی شعبے میں تعاون بڑھانے پر بھی اتفاق کیا ہے۔ ہم دفاع کے تمام شعبوں، مینوفیکچرنگ، ٹیکنالوجی، ڈیزائن اور ترقی میں خود انحصار ہندوستان کے لیے برطانیہ کی حمایت کا خیرمقدم کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے ہندوستان میں جاری جامع اصلاحات، ہمارے بنیادی ڈھانچے کو جدید بنانے کے پروگرام اور قومی انفراسٹرکچر پائپ لائن کے بارے میں بھی تبادلہ خیال کیا۔ ہم ہندوستان میں برطانوی کمپنیوں کی بڑھتی ہوئی سرمایہ کاری کا خیرمقدم کرتے ہیں۔

ذریعہ
یواین آئی

تبصرہ کریں

یہ بھی دیکھیں
بند کریں
Back to top button