دہلی کے ہنومان مندر میں رانا جوڑے کی پوجا

بھگوا ساڑی پہنے ہوئے اور اپنے شوہر اور بیسیوں حامیوں کے ساتھ امراوتی کی آزاد رکن پارلیمنٹ نونیت رانا‘ نارتھ ا یوینیو میں اپنی قیامگاہ سے کناٹ پلیس میں واقع ہنومان مندر تک پیدل گئیں تاکہ پوجا کرسکیں۔

نئی دہلی: آزاد رکن پارلیمنٹ نونیت رانا اور ان کے شوہر و رکن اسمبلی روی رانا نے آج یہاں ہنومان مندر میں ہنومان چالیسہ کا جاپ کیا اور شیو سینا کی شکل میں مہاراشٹرا پر منڈلارہے سب سے بڑے خطرہ کو ٹال دینے کی پرارتھنا کی۔

ممبئی میں گذشتہ ماہ چیف منسٹر ادھو ٹھاکرے کی رہائش گاہ پر ہنومان چالیسہ کا جاپ کرنے کے اعلان کے بعد گذشتہ ماہ اس جوڑے کو غداری کے الزام میں گرفتار کرلیا گیا تھا  اور 12 دن بعد ضمانت پر ان کی رہائی عمل میں آئی تھی۔

بھگوا ساڑی پہنے ہوئے اور اپنے شوہر اور بیسیوں حامیوں کے ساتھ امراوتی کی آزاد رکن پارلیمنٹ نونیت رانا‘ نارتھ ا یوینیو میں اپنی قیامگاہ سے کناٹ پلیس میں واقع ہنومان مندر  تک  پیدل گئیں تاکہ پوجا کرسکیں۔ نونیت نے مندر کے باہر نامہ نگاروں کو بتایا کہ ادھو ٹھاکرے مہاراشٹرا پر منڈلا رہا سب سے بڑا خطرہ ہے۔

 میں مہاراشٹرا کو اس خطرہ سے نجات دلانے یہاں پوجا کرنے آئی ہوں۔ رانا جوڑے نے مندر میں آرتی بھی کی۔ یہ دورہ ایک ایسے وقت کیا گیا جب ادھو ٹھاکرے ممبئی میں ایک بڑی ریالی سے خطاب کرنے والے ہیں۔ اسی دوران نونیت رانا نے شیو سینا پر الزام عائد کیا کہ اس نے مہاراشٹرا میں اقتدار کی خاطر کانگریس اور این سی پی کے ساتھ ہاتھ ملا لیا ہے اور ہندوتوا کو خیرباد کہہ دیا ہے۔

 شیو سینا لیڈر سنجے راوت کے اس تبصرہ کا جواب دیتے ہوئے کہ شیو سینا کا حقیقی اسٹائل دکھانے کا وقت آگیا ہے، نونیت رانا نے کہا کہ ادھو ٹھاکرے، بالا صاحب ٹھاکرے کی وراثت کو بھول گئے ہیں۔ بالا صاحب ہندو توا کے سچے مشعل بردار تھے۔ یہ تمام لوگ ڈبلیکیٹ ہیں۔

نونیت رانا نے ٹھاکرے کو چیلنج کیا کہ کہ ہندو توا کاز کو آگے بڑھانے پر انہیں اور ان کے شوہر کو نشانہ بنانے کے بجائے وہ اورنگ زیب کے مقبرہ پر   فاتحہ خو انی کرنے والوں کے خلاف کارروائی کریں۔

واضح رہے کہ مہاراشٹرا میں اورنگ آباد کے قریب واقع خلد آباد میں مغل حکمراں اورنگ زیب کے مزار پر اے آئی ایم آئی ایم لیڈر اکبر الدین اویسی نے فاتحہ خوانی کی۔

رانا جوڑے نے شیو سینا پر تنقیدیں جاری رکھتے ہوئے کہا کہ وہ لوگ ممبئی کی میونسپل کارپوریشن میں جہاں انتخابات مقرر ہیں، شیو سینا کی کرپشن کی لنکا کو ڈھا دیں گے۔ واضح رہے کہ شیو سینا 1996ء سے ممبئی میونسپل کارپوریشن پر قابض ہے، جو ملک کی سب سے دولتمند بلدیہ ہے۔

تبصرہ کریں

Back to top button