نواب ملک سے وزارتی قلمدان عارضی طورپر واپس لے لیا گیا

وہ فی الحال 21 مارچ تک عدالتی تحویل میں ہیں۔ این سی پی صدر شردپوار کی زیرصدارت اجلاس میں طئے پایا کہ نواب ملک سے ان کے قلمدان اور دیگر سرکاری کام کاج واپس لے لیا جائے تاکہ ان کے غیاب میں فائلوں کا انبار نہ لگے۔

ممبئی: انفورسمنٹ ڈائرکٹوریٹ (ای ڈی) کے ہاتھوں گرفتاری کے زائداز 3 ہفتے بعد نیشنلسٹ کانگریس پارٹی(این سی پی) نے جمعہ کے دن مہاراشٹرا کے وزیر نواب ملک سے ان کے قلمدان اور دیگر سرکاری ذمہ داریاں عارضی طورپر واپس لے لیں۔

62 سالہ نواب ملک کو جو وزیر اقلیتی امور کے علاوہ اضلاع گونڈیا اور پربھنی کے نگراں وزیر ہیں‘ 23 فروری کو گرفتار کیا گیا تھا۔

وہ فی الحال 21 مارچ تک عدالتی تحویل میں ہیں۔ این سی پی صدر شردپوار کی زیرصدارت اجلاس میں طئے پایا کہ نواب ملک سے ان کے قلمدان اور دیگر سرکاری کام کاج واپس لے لیا جائے تاکہ ان کے غیاب میں فائلوں کا انبار نہ لگے۔

پارٹی کے ریاستی صدر اور وزیر آبی وسائل جینت پاٹل نے کہا کہ نواب ملک کابینی وزیر اور پارٹی کے ممبئی یونٹ کے صدر برقرار رہیں گے۔ صرف ان کی وزارتی ذمہ داریاں ان کے دیگر ساتھی نبھائیں گے اور یہ عارضی انتظام ہوگا۔

تبصرہ کریں

Back to top button