ویمنس ورلڈ کپ: ہندوستان کی بنگلہ دیش کے خلاف 110 رن سے کامیابی

پہلے بلے بازی کرتے ہوئے ہندوستان نے درمیانی اننگز میں نقصانات کے بعد 7 / 229 کا اوسط اسکور درج کیا جس کے لئے 80 گیندوں میں 50 رن بھاٹیہ نے بنائے جب کہ رانا نے 27 اور پوجا وستراکر نے 30 رن اسکور کئے۔

ہیملٹن: یستیکا بھاٹیہ کی پُرعزم نصف سنچری اور اسنیہ رانے کے آل راؤنڈر مظاہرہ کے باعث ہندوستان‘ بنگلہ دیش کے خلاف 110 رن سے کامیابی حاصل کرتے ہوئے آئی سی سی ویمنس ورلڈکپ سیمی فائنل میں اپنی جگہ برقرار رکھنے میں کامیاب دکھائی دے رہا ہے۔ پہلے بلے بازی کرتے ہوئے ہندوستان نے درمیانی اننگز میں نقصانات کے بعد 7 / 229 کا اوسط اسکور درج کیا جس کے لئے 80 گیندوں میں 50 رن بھاٹیہ نے بنائے جب کہ رانا نے 27 اور پوجا وستراکر نے 30 رن اسکور کئے۔

اسکور کا دفاع کرتے ہوئے اسپنرس جس کی قیادت رانا (4/30) نے کھیل پر قابو رکھتے ہوئے باقاعدہ وقفہ سے وکٹ لیتی رہیں۔ ہندوستان نے بنگلہ دیش کو 40.3 اوورس میں 119 پر بولڈ کردیا۔ اس طرح اُس نے ٹورنمنٹ میں اپنی تیسری کامیابی درج کی۔ اِس بڑی کامیابی سے ہندوستان کو اپنے رن ریٹ میں (0.768) مزید بہتر بنانے میں مدد ملی۔ میتھالی راج کی زیر قیادت ٹیم کا مقابلہ اتوار کو آخری لیگ میاچ میں ساؤتھ افریقہ سے ہوگا۔

اُس میاچ سے قبل اگر دوسرے مقام کے ساؤتھ افریقہ نے ویسٹ انڈیز کو جمعرات کے دن شکست دے دیں تو ہندوستان کو سیمی فائنل میں پہنچنے کا موقع بہتر ہوجائے گا۔ ہندوستان کا فیصلہ سینئر اسپنر پونم یادو (1/25) کو میگھناسنگھ کی جگہ لانا فائدہ مند ثابت ہوا جب کہ اسپنرس دونوں جانب سے دھیمی وکٹ پر بولنگ کررہے تھے۔ بنگلہ دیش کو رن بنانے میں تکلیف محسوس ہونے لگی۔ ہندوستان نے بنگلہ دیش کو 25 اوورس کے بعد 69/5 تک محدود کردیا۔ لتامونڈل 24 اور سلیمہ خاتون 32 نے 40 رنوں کی شراکت داری کے ذریعہ کچھ مزاحمت کی۔

 اِس شراکت داری کو جھولن گو سوامی نے اُس وقت بریک کیا جب انہوں نے اواخرالذکر کو آؤٹ کیا جب کہ وستراکر چند اوورس بعد ہی پویلین لوٹ گئیں۔ پیس جوڑی گو سوامی (2/19) اور وستراکر (2/26) نے آپس میں 4 وکٹس تقسیم کرلئے جب کہ اسپنرس نے مابقی کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا۔ قبل ازیں سمرتی مندھانا (30) اور شفالی ورما (42) نے پہلی وکٹ کے لئے 74 رنوں کی شراکت داری کی لیکن ریتو مونی (3/37) اور ناہیدہ اختر (2/42) نے آپس میں 5 وکٹس کو تقسیم کیا جس سے ہندوستان کا اسکور 74 بغیر کسی نقصان سے 108 پر 4 ایک موقع پر ہوگیا۔ کپتان میتھالی راج صفر پر آؤٹ ہوگئی۔

 اِس موقع پر ہندوستان 3 وکٹس جلدی جلدی گنوا دیئے۔ نائب کپتان ہرمن پریت کور 14، بھاٹیہ کے ساتھ شامل ہوئیں، دونوں نے اننگز کو پھر سنبھالا اور 70 گیندوں میں 34 رن بنائے۔ بھاٹیہ 80 گیندوں میں 50 رن اور ریچا گھوس (26)، 54 رنوں کی جس سے ہندوستان 150 رنوں کے اسکور کو پارکرسکا تاہم اختر نے بنگلہ دیش کو اُس وقت واپس لایا جب انہوں نے گھوس کو وکٹ کے پیچھے کیاچ آؤٹ کیا۔

اختر نے اپنے 50 رن مکمل کئے۔ بھاٹیہ بھی دوسری گیند پر آؤٹ ہوگئی جس کے بعد وستراکر 30 اور رانا 27 مل جل کر 44 ویں اوورس کے اختتام تک 6 وکٹ پر 180 رنوں تک پہنچادیا۔ بہرحال ہندوستان 44 ویں اوورس کے بعد 38 رنوں کا اضافہ کرتے ہوئے 200 کے نشانہ کو پار کرسکا۔ آخری کے 10 اوورس میں 64 رن بنائے گئے۔

ذریعہ
پی ٹی آئی

تبصرہ کریں

Back to top button