چیف آف ڈیفنس جنرل بپن راوت کا ہیلی کاپٹرگر کر تباہ، 13 ہلاک

فضائیہ نے ایک ٹوئٹ میں کہا کہ فضائیہ کا ایم آئی,17 وی5 ہیلی کاپٹر ٹاملناڈو میں کنور کے پاس آج حادثہ کا شکار ہوگیا اس میں چیف آف ڈیفنس بپن راوت بھی سوار تھےحادثہ کی جانچ کے احکامات دے دیے گئے ہیں۔

چینائی: ہندستانی فضائیہ کا ایک ہیلی کاپٹر آج ٹاملناڈو میں پہاڑی ضلع نیل گری میں کنور کے پاس حادثہ کا شکار ہوگیا جس سے فوج کے 13 سینئر افسران کی موت ہوگئی ہیلی کاپٹر میں چیف آف ڈیفنس بپن راوت اور 13 دیگر افراد سوار تھے فضائیہ نے ایک ٹوئٹ میں کہا کہ فضائیہ کا ایم آئی,17 وی5 ہیلی کاپٹر ٹاملناڈو میں کنور کے پاس آج حادثہ کا شکار ہوگیا اس میں چیف آف ڈیفنس بپن راوت بھی سوار تھےحادثہ کی جانچ کے احکامات دے دیے گئے ہیں۔

دفاع کے ذرائع نے بتایا کہ ہیلی کاپٹر میں 14 افراد سوار تھے۔ ہیلی کاپٹر سولور سے ویلنگٹن کی جانب محو پرواز تھا۔ تبھی اچانک اس میں آگ لگ گئی۔ حادثہ کا شکار ہیلی کاپٹر کے ملبہ سے اب تک 13 نعشیں برآمد ہوچکی ہیں۔ تمام نعشیں بری طرح جلی ہوئی ہیں جس کی وجہ سے ان کی شناخت کرنا ممکن نہیں ہے۔اس حادثہ میں سنگین طور پر زخمی اور جھلسے ہوئے تین افسران کو اسپتال میں داخل کرایا گیا ہے۔ ہیلی کاپٹر میں سوار بقیہ سات لوگوں کے بارے میں ابھی کوئی اطلاع نہیں ملی ہے۔

غیر مصدقہ رپورٹوں کے مطابق انڈین چیف آف ڈیفنس جنرل بپن راوت بھی اس ہیلی کاپٹر میں سوار تھے۔ ان کے بارے میں ابھی کچھ پتہ نہیں چل سکا ہے۔ موقع پر راحت رسانی اور بچاؤ کا کام جاری ہے۔ ٹاملناڈو کے ہیلتھ سکریٹری ڈاکٹر جے رادھا کرشنن نے کہا کہ حادثہ میں زخمی اور جھلسے ہوئے لوگوں کو طبی سہولت فراہم کرنے کیلئے خصوصی طبی ٹیم موقع پر بھیج دی گئی ہے۔

ذریعہ
یواین آئی

تبصرہ کریں

Back to top button