گورکھ ناتھ مندر حملہ کیس کے ملزم مرتضیٰ سے لکھنو میں پوچھ گچھ

یوپی پولیس کے مطابق مرتضیٰ نے زبردستی گورکھ ناتھ مندر کے احاطہ میں داخل ہونے کی کوشش کی اور ڈیوٹی پر تعینات پولیس ملازمین پر تیز دھار ہتھیار سے حملہ کیا۔

لکھنؤ: گورکھ ناتھ مندر حملہ کیس کے ملزم احمد مرتضیٰ عباسی کو لکھنؤ میں انسدادِ دہشت گردی اسکواڈ کے ہیڈ کوارٹر سے لایا گیا ہے، تاکہ اس سے مزید پوچھ تاچھ کی جاسکے۔

چہارشنبہ کو گورکھپور سے روانہ ہونے سے پہلے اس کے کئی طبّی معائینے کرائے گئے۔ اس کا لیاپ ٹاپ اور موبائل فون تحقیقات کے لیے فارنسک سائنس لیباریٹری روانہ کیا جائے گا۔ اے ٹی ایس کے ذرائع نے یہ بات بتائی۔

یوپی پولیس کے مطابق مرتضیٰ نے زبردستی گورکھ ناتھ مندر کے احاطہ میں داخل ہونے کی کوشش کی اور ڈیوٹی پر تعینات پولیس ملازمین پر تیز دھار ہتھیار سے حملہ کیا۔

یو این آئی کے بموجب اترپردیش کے ضلع گورکھپور میں واقع گورکھناتھ مندر کے سیکورٹی ملازم پر قاتلانہ حملہ کرنے کے ملزم مرتضی عباسی کو پوچھ گچھ کے لئے اے ٹی ایس آج لکھنؤ لے کر آئی ہے۔

ریاست کے چیف منسٹر یوگی آدتیہ ناتھ کے آبائی ضلع گورکھپورواقع گورکھناتھ مندر کے سیکورٹی اہلکار پر ہوئے حملے کو دہشت گردانہ سرگرمی کے شبہ کے پیش نظر اے ٹی ایس معاملے کے کلیدی ملزم مرتضی سے ہر نکات پر پوچھ گچھ کرنے کے مقصد سے لکھنؤ لائی ہے۔

تبصرہ کریں

Back to top button