ہمالیہ سے بحرہند کے درمیان رہنے والے تمام افراد ”ہندو“: مرکزی وزیر اشوینی کمار چوبے

مرکزی وزیر اشوینی چوبے نے کہاکہ ہمیں لفظ”ہندو“پر کبھی بھی تحدیدات اور محدود نہیں رکھنا چاہئے۔ ہندو جغرافیائی کی شناخت ہیں ایسے تمام افراد جو ہمالیہ اور بحرہند کے درمیان کی زمین پر رہتے ہیں وہ سب ہندو ہیں۔

حیدرآباد: مرکزی وزیر اشوینی کمار چوبے نے ہفتہ کے روز یہ دعویٰ کیا کہ ”ہندو جغرافیائی شناخت ہیں اور ہمالیہ اور بحرہند کے درمیان زمین پر رہنے والے تمام افراد ہندو ہیں“۔ مرکزی مملکتی وزیر امور صارفین، تغذیہ اور عوام نظام تقسیم وماحولیات چوبے نے ڈیجیٹل ہندوکا نکلیو کے10ویں پروگرام میں یہ ریمارکس کئے اس پروگرام کا اہتمام حیدرآباد میں بھارت نیتی آرگنائزیشن نے کیا تھا۔

انہوں نے کہا کہ بیرونی ممالک کے کئی اسکالرس اس حقیقت سے اتفاق کرتے ہیں ہندوستان علم کی سرزمین ہے اور ہم تمام کو ہندوستانی ہونے پر فخر ہونا چاہئے۔ مرکزی وزیر اشوینی کمار چوبے نے کہاکہ میں یہ کہنا چاہتا ہوں کہ ہندودھرم ایک طرز زندگی ہے۔ ہمیں لفظ”ہندو“پر کبھی بھی تحدیدات اور محدود نہیں رکھنا چاہئے۔ ہندو جغرافیائی کی شناخت ہیں ایسے تمام افراد جو ہمالیہ اور بحرہند کے درمیان کی زمین پر رہتے ہیں وہ سب ہندو ہیں۔

چوبے نے یہ بات کہی۔چوبے کے علاوہ بی جے پی کے سینئر قائد مرلی دھر راؤ، اور پارٹی ایم پی منوج تیواری ایم پی اور دیگر اُن افراد میں شامل ہیں جو اس تقریب میں شریک تھے۔ اس پروگرام میں چوپے نے کہا کہ شمال سے جنوبی ریاستوں تک تمام لوگوں کی موجودگی ملک کی ترقی اور اتحاد کی علامت ہے۔انہوں نے کہاکہ ہندوستان ایک متحرک جمہوریت ہے جسے تمام دنیا قبول کرتی ہے۔ ہم ہندوستان کو اپنی ماں مانتے ہیں اور ہمارا ملک بھارت ماتا ہے۔

یہیں بات ہمیں، دوسروں سے الگ کرتی ہے۔ چوبے کے حوالہ سے منتظمین نے جاری کردہ ایک ریلیز میں یہ بات کہی۔ ملک کی دریاؤں کے احیاء کے بارے میں این ڈی اے حکومت کی مساعی کے بارے میں انہوں نے کہا کہ دریا گنگا کی صفائی اور اس کے تحفظ کیلئے مرکز نے ”نامامی گنگا“ پر اجکٹ شروع کیا ہے۔ اس تقریب میں ایک ہزار کے قریب نوجوان سوشل میڈیا جہد کار شریک تھے۔

ذریعہ
پی ٹی آئی

تبصرہ کریں

Back to top button