شیوسینا کے باغی ارکان اسمبلی کی ’نااہلی‘ کی کارروائی پر روک

چیف جسٹس این۔ وی رمنا کی سربراہی والی بنچ نے ادھو ٹھاکرے کی شیوسینا کے سینئر وکیل کپل سبل کی درخواست پر گورنر مہاراشٹر کے وکیل سالیسٹر جنرل تشار مہتہ سے کہا ’’براہ کرم اسپیکر کو کوئی فیصلہ نہ لینے کے لئے مطلع کریں۔’’ ہم معاملے کی سماعت کریں گے‘‘۔

نئی دہلی: سپریم کورٹ نے پیر کو مہاراشٹر قانون ساز اسمبلی کے نئے اسپیکر سے کہا کہ وہ وزیر اعلی ایکناتھ شنڈے اور دیگر شیو سینا کے ’’باغی‘‘ممبران اسمبلی کے خلاف دائر نااہلی کی درخواستوں پر کارروائی آگے نہ بڑھائیں۔

چیف جسٹس این۔ وی رمنا کی سربراہی والی بنچ نے سابق وزیر اعلیٰ اور ادھو ٹھاکرے کی شیو سینا کے سینئر وکیل کپل سبل کی درخواست پر مہاراشٹر کے گورنر کی طرف سے پیش ہونے والے سالیسٹر جنرل تشار مہتہ سے کہا ’’براہ کرم اسپیکر کو کوئی فیصلہ نہ لینے کے لئے مطلع کریں۔’’ ہم معاملے کی سماعت کریں گے‘‘۔

مسٹر سبل کے ’خصوصی ذکر‘ کے دوران معاملے کی فوری سماعت کے لیے درخواست پر، بنچ نے کہا کہ اس معاملے کو درج کرنے میں کچھ وقت لگے گا، کیونکہ متعلقہ معاملے کی سماعت کرنے والی بنچ کو حتمی شکل دینے کی ضرورت ہے۔

سینئر وکیل مسٹر سبل نے کہا کہ نااہلی کی درخواست منگل کو سماعت کے لیے اسپیکر کے سامنے درج ہے اور تب تک فیصلہ نہیں کیا جانا چاہیے، جب تک عدالت عظمیٰ اس معاملے کی سماعت نہیں کرلیتی۔

سپریم کورٹ نے اس سے قبل شیوسینا کے ناراض ایم ایل ایز کو اسمبلی کے ڈپٹی اسپیکر کے ذریعہ جاری کردہ نااہلی نوٹس کا جواب دینے کے لیے 12 جولائی تک کا وقت دیا تھا۔

ایم ایل اے کثیر تعداد کے ’طاقت امتحان‘ کے لیے ایوان بلانے اور مسٹر شنڈے کو ریاست کے وزیر اعلیٰ کے طور پر حلف لینے کے لیے مدعو کرنے کے گورنر کے فیصلے کے خلاف بھی الگ الگ درخواستیں دائر کی گئیں۔

...رشتوں کا انتخاب
...اب اور بھی آسان

لڑکی ہو یا لڑکا، عقد اولیٰ ہو یا عقد ثانی
اب ختم ہوگی آپ کی تلاش اپنے ہمسفر کی

آج ہی مفت رجسٹر کریں اور فری سبسکرپشن حاصل کرکے منصف میٹریمونی کے تمام فیچرس سے استفادہ کریں۔

آج ہی مفت رجسٹر کریں اور منصف میٹریمونی کے تمام فیچرس سے استفادہ کریں۔

www.munsifmatrimony.com

تبصرہ کریں

Back to top button