جرائم و حادثات

کم نشانات لانے پر سرزنش، طالب علم کا کلاس روم میں چاقو سے حملہ، پرنسپل ہلاک

امتحان میں کم نشانات لانے پر سرزنش پر انٹرمیڈیٹ کے طالب علم نے کلاس میں پرنسپل پر چاقو سے حملہ کردیا جس کے نتیجہ میں وہ ہلاک ہوگیا۔

حیدرآباد: امتحان میں کم نشانات لانے پر سرزنش پر انٹرمیڈیٹ کے طالب علم نے کلاس میں پرنسپل پر چاقو سے حملہ کردیا جس کے نتیجہ میں وہ ہلاک ہوگیا۔

متعلقہ خبریں
اسکول میں طالب علم کی خود کشی
لون ایپ کے ایجنٹس کی ہراسانی، ایک شخص نے خودکشی کرلی
جمعہ کی نماز اسلام کی اجتماعیت کا عظیم الشان اظہار ہے: مولانا حافظ پیر شبیر احمد
تلنگانہ میں کانگریس کو 10 نشستیں ملیں گی، چیف منسٹر پرامید
حیدرآباد دونوں ریاستوں کا مشترکہ دارالحکومت نہیں رہا

یہ واقعہ آسام میں پیش آیا۔پرنسپل کی شناخت راجیش کے طورپر کی گئی ہے جس کا تعلق آندھراپردیش کے اونگول سے ہے۔

وہ آسام کے سیوا ساگر میں ایک پرائیویٹ اسکول کے پرنسپل اور لکچررکے طور پر خدمات انجام دے رہا تھا۔

راجیش نے 11ویں کلاس کے طالب علم کو کیمسٹری میں کم نشانات حاصل کرنے اور کلاس میں خراب رویہ پر سرزنش کی جس پر طالب علم نے برہمی کے عالم میں راجیش پراُس وقت چاقو سے حملہ کر دیا جو وہ کلاس میں پڑھارہا تھا۔

اس کو زخمی حالت میں اسپتال منتقل کیاجارہا تھا کہ اس کی موت ہوگئی۔

a3w
a3w