جنوبی بھارت

راشن دکانوں پر مودی کی تصویر نہیں لگائی جائے گی

اسمبلی میں انڈین یونین مسلم لیگ رکن پی عبدالحمیدکے سوال کا جواب دیتے ہوئے چیف منسٹر پی وجین نے کہا کہ لوک سبھا الیکشن کے قریب سیلفی مہم بی جے پی کی انتخابی مہم کا حصہ ہے۔

ترواننت پورم: حکومت ِ کیرالا نے پیر کے دن کہا کہ وہ مرکزی حکومت کی یہ ہدایت نہیں مانے گی کہ ریاست میں راشن دکانوں پر نیشنل فوڈ سیکوریٹی ایکٹ (این ایف ایس اے) کے لوگو کے ساتھ وزیراعظم نریندرمودی کی تصویر والے سائن بورڈس اور فلیکسی بیانرس لگائے جائیں۔

متعلقہ خبریں
مرکز کے ظلم کے خلاف انسانی زنجیر احتجاج، لاکھوں افراد کی شرکت
مسلم لیگ قائد کے مکان پر ریکوری نوٹس
کیرالہ میں 100 کروڑ روپئے کا غبن ایک شخص گرفتار
کیرالا میں Baptism Event کے دوران سمیت غذا سے زائد از 100 افراد علیل

اسمبلی میں انڈین یونین مسلم لیگ رکن پی عبدالحمیدکے سوال کا جواب دیتے ہوئے چیف منسٹر پی وجین نے کہا کہ لوک سبھا الیکشن کے قریب سیلفی مہم بی جے پی کی انتخابی مہم کا حصہ ہے۔

ہم یہ نشاندہی کرتے ہوئے مرکزی حکومت کو بتادیں گے کہ یہ صحیح نہیں ہے اور اس پر عمل آوری دشوار ہے۔

یہ بھی دیکھیں گے کہ آیا اس سلسلہ میں الیکشن کمیشن سے رجوع کیا جاسکتا ہے یا نہیں۔ کیرالا میں راشن کی 14 ہزار دکانیں ہیں۔