مشرق وسطیٰ

سعودی عرب میں عالمی قرات مقابلہ ”عطر الکلام“

فلسطینی نژاد امریکن فلم اور ٹیلی ویژن اسکرپٹ رائٹر یاسر عمرشاہین نے حالیہ انٹرنیشنل قرات اور اذاں کے مقابلوں میں شرکت کی۔

ریاض: فلسطینی نژاد امریکن فلم اور ٹیلی ویژن اسکرپٹ رائٹر یاسر عمرشاہین نے حالیہ انٹرنیشنل قرات اور اذاں کے مقابلوں میں شرکت کی۔

شاہین نے اپنے منفرد‘ لحن کے ساتھ قرات کے ذریعہ سامعین کو مسحور کردیا۔ قرات کی ویڈیو سوشل میڈیا پر دیکھتے ہی دیکھتے وائرل ہوگئی اور جس نے قرآن کی یہ پْرسوز قرات سنی وہ عش عش کر اْٹھا۔

قاری یاسر شاہین کی قرات سے ہرآنکھ نم ہوگئی۔قاری یاسر کا کہنا تھا کہ قاری بن کر میں نے اپنی والدہ کی خواہش پوری کی ہے جس کے لیے پہلے اللہ کے آخری پیغام قرآن کو اپنے سینے میں محفوظ کیا اور ساتھ ساتھ اس عظیم کتاب کی قرات کے مختلف انداز سیکھتا رہا۔

قاری یاسر دنیاوی تعلیم بھی حاصل کرتے رہے اور کیلی فورنیا کی سان ہوزے یونیورسٹی میں درس و تدریس سے وابستہ رہے اور اسلامی ممالک کے ٹیلی ویڑن چینلز پر متعدد پروگراموں میں حصہ لیا۔

علاوہ ازیں 130 سے زیادہ دستاویزی پروگراموں اور 14 دستاویز فلموں کی تیاری کی نگرانی بھی کی۔واضح رہے کہ قرات کے عالمی مقابلے“عطر الکلام”میں 50 ہزار سے زائد قاری حصہ لے رہے ہیں جن میں سے 50 فاتح خوش نصیبوں کو 12 ملین ریال کے انعامات سے نوازا جائے گا۔

تلاوت قرآن کریم کی کیٹگری میں پہلی پوزیشن پر آنے والے کے لیے 30 لاکھ ریال جب کہ اذان میں پہلی پوزیشن لینے والے کو 20 لاکھ ریال انعام سے نوازا جائے گا۔

a3w
a3w