مشرق وسطیٰ

غزہ میں پہلا روزہ، اسرائیل نے فلسطینیوں کو مسجد اقصیٰ میں داخل ہونے سے روک دیا

Gaza, Palestine, Israel, not Palestinians, Aqsa Mosque, 1000 meters inside the Rock City

غزہ: دنیا کے کئی ممالک کی طرح غزہ میں بھی آج رمضان المبارک کا آغاز ہوچکا ہے، غزہ میں کئی بچوں نے مقدس ماہ کا استقبال کیا جبکہ اسرائیل نے فلسطینیوں کو مسجد اقصیٰ میں نماز کی ادائیگی سے روک دیا۔

متعلقہ خبریں
رمضان میں مسجداقصیٰ کیلئے اسرائیل کی نئی پابندیاں
نیتن یاہو نے کم وسائل میں بھی لڑنے کا اعلان کیا
اسرائیل رہائشیوں کو رفح سے غزہ کے جنوب مغربی ساحل پر المواسی منتقل کرنے کا منصوبہ بنا رہا ہے
وزیر خارجہ ملایشیا، فلسطین کو اقوام متحدہ کی رکنیت کی وکالت کریں گے
رفح پر اسرائیلی حملہ، خون کی ہولی کا باعث بن سکتا ہے: ڈبلیو ایچ او

اسرائیلی پولیس کی جانب سے سخت حفاظتی اقدامات اور غزہ میں جنگ اور بھوک کی لہر کے درمیان فلسطینی رمضان المبارک کی تیاری کر رہے ہیں، دوسری جانب غزہ میں جنگ بندی کو یقینی بنانے کے لیے مذاکرات تعطل کا شکار ہیں۔

قطری نشریاتی ادارے الجزیرہ کی رپورٹ کے مطابق اقوام متحدہ کا کہنا ہے کہ غزہ غذائی قلت کا شکار ہے، رمضان المبارک میں جنگ بندی کا مطالبہ کرتے ہیں۔

مقامی میڈیا کی رپورٹس کے مطابق اسرائیلی فورسز نے رمضان المبارک کے موقع پر یروشلم میں فلسطینیوں کو مسجد اقصیٰ میں داخل ہونے سے روک دیا۔

اسرائیل نے یروشلم میں ہزاروں کی تعداد میں پولیس تعینات کردی ہے۔