حیدرآباد

شادی کے موقع پر بائیک کا اچانک مطالبہ، منگل سوترباندھنے سے دلہے کا انکار، رکن اسمبلی نے 50 ہزار روپئے گاڑی کیلئے دیئے

حیدرآباد: شادی کے موقع پر منگل سوتر باندھنے سے انکار کرتے ہوئے ایک دلہے نے بائیک کی مانگ کی جس سے کچھ دیر کیلئے وہاں موجود تمام افراد میں تشویش کی لہردوڑگئی۔

حیدرآباد: شادی کے موقع پر منگل سوتر باندھنے سے انکار کرتے ہوئے ایک دلہے نے بائیک کی مانگ کی جس سے کچھ دیر کیلئے وہاں موجود تمام افراد میں تشویش کی لہردوڑگئی۔

متعلقہ خبریں
حیدرآباد دونوں ریاستوں کا مشترکہ دارالحکومت نہیں رہا
بیٹی کی شادی کی رقم لے کر باپ فرار۔ ماں خودکشی کرلینے پر مجبور
صدر ٹی پی سی سی کے عہدہ کیلئے کانگریس قائدین کی دوڑ دھوپ
لڑکیوں کی شادی کی عمر بڑھانے کا بل ساقط
تلنگانہ میں کانگریس کو 10 نشستیں ملیں گی، چیف منسٹر پرامید

تاہم رکن اسمبلی کی مداخلت اور بائیک کیلئے رقم کا بڑاحصہ فوری طورپر فراہم کرنے کے بعد یہ شادی انجام پائی۔

یہ واقعہ تلنگانہ کے ضلع کریم نگرضلع کے شنکرپٹنم میں پیش آیا۔

تفصیلات کے مطابق ضلع کے علاقہ امبال پور کی سابق سرپنچ لچھما کی بیٹی انوشا کی شادی وینم پلی کے ونائک سے طئے پائی۔

شادی کی تقریب میں تمام مہمان موجود تھے تاہم اچانک دلہے نے منگل سوتر پہنانے سے یہ کہتے ہوئے انکار کردیا کہ اس کو بائیک چاہئے۔

اس کی مطالبہ کی جلد تکمیل کو یقینی بنایاجائے۔دلہے کی جانب سے اچانک اس طرح کی مانگ پر دلہن اوراس کے تمام رشتہ دارحیرت زدہ ہوگئے۔

شادی کی تقریب میں تلنگانہ کی حکمران جماعت بی آرایس کے رکن اسمبلی بال کشن بھی موجود تھے۔

اس معاملہ کا علم ہونے پرانہوں نے مداخلت کرتے ہوئے اپنی جانب سے بائیک کی خریداری کے لئے 50 ہزارروپئے کی رقم دی۔

یہ رقم دلہن کے ہاتھوں دلہے کو دی گئی۔

اس موقع پر رکن اسمبلی نے بائیک کی خریداری کے لئے بقیہ رقم شوروم میں ادا کرنے کا وعدہ کیاجس کے بعد یہ شادی انجام پائی۔

a3w
ذریعہ
یواین آئی
a3w