بین الاقوامی
ٹرینڈنگ

اقوام متحدہ میں مسلم رہنماؤں نے قرآن پاک کی بے حرمتی کے واقعات کی مذمت کی

ایرانی صدر ابراہیم رئیسی نے کہاکہ مغرب آزادی اظہار سے توجہ ہٹانا چاہتا ہے، مغربی ممالک میں قرآن پاک کی بے حرمتی سے لے کر اسکولوں میں حجاب پر پابندی کےاقدامات قابل مذمت ہیں۔

نیویارک: اقوام متحدہ کے جنرل اسمبلی اجلاس میں مسلم رہنماؤں نے قرآن پاک اور مقدس اوراق کی بے حرمتی کے واقعات کی مذمت کی ہے۔ ساتھ ہی مسلم رہنماؤں کی جانب سے مغربی ممالک پر شدید تنقید بھی کی گئی۔

متعلقہ خبریں
اسرائیل جان بوجھ کر فلسطینیوں کو بھوکا مارنا چاہتا ہے: اقوام متحدہ
مہاراشٹرا میں مسلمانوں کو 5 فیصد کوٹہ دینے رئیس شیخ کا مطالبہ
کانگریس اور آر ایس ایس کومسلم قیادت برداشت نہیں: اسد اویسی
مسلم لیڈروں نے بنگلورو پولیس کمشنر کی تقرری پر افسوس کا اظہار کیا
افغانستان میں خواتین اپنے حقوق سے محروم:انٹونیو گٹریس

ترکیہ کے صدر رجب طیب اردوان نےکہاکہ مغربی ممالک اسلامو فوبیا سمیت نسل پرستی میں مبتلاہیں، بے حرمتی کے واقعات ناقابل برداشت سطح پر پہنچ چکے ہیں۔

ایرانی صدر ابراہیم رئیسی نے کہاکہ مغرب آزادی اظہار سے توجہ ہٹانا چاہتا ہے، مغربی ممالک میں قرآن پاک کی بے حرمتی سے لے کر اسکولوں میں حجاب پر پابندی کےاقدامات قابل مذمت ہیں۔

اس کے علاوہ امیر قطر شیخ تمیم بن حمد الثانی کاکہنا تھاکہ جان بوجھ کر دوسروں کی حرمت پر سمجھوتے کو آزادی اظہار کا نام نہیں دینا چاہیے۔