شمال مشرق

سعودی عرب: ملازمین کے لئے ’’تحفظ اجور‘‘ نظام متعارف

غیر ملکی میڈیا کے مطابق وزارت افرادی قوت و سماجی بہبود کے اس نظام کے تحت نجی اداروں کو پابند کیا گیا ہے کہ وہ ’مدد‘ پورٹل کے ذریعے ملازمین کی تنخواہیں بروقت بینکوں میں جمع کروائیں گے۔

ریاض: سعودی عرب کے ملازمین کے لئے بڑی خوشخبری یہ ہے کہ وزارت افرادی قوت و سماجی بہبود نے ’تحفظ اجور‘ نظام متعارف کروا دیا۔

متعلقہ خبریں
اسرائیل حماس مذاکرات شروع کریں، غزہ کے لوگ زیادہ انتظار نہیں کر سکتے: سعودی عرب
سعودی عرب میں لڑکی سے غیر اخلاقی حرکت پر ہندوستانی شہری گرفتار
ایران سے 9 سال بعد پہلا گروپ عمرہ کیلئے روانہ
سعودی عرب میں پانچ پاکستانیوں کو سزائے موت دے دی گئی
سعودی عرب کا اسرائیل کے خلاف اہم بیان

غیر ملکی میڈیا کے مطابق وزارت افرادی قوت و سماجی بہبود کے اس نظام کے تحت نجی اداروں کو پابند کیا گیا ہے کہ وہ ’مدد‘ پورٹل کے ذریعے ملازمین کی تنخواہیں بروقت بینکوں میں جمع کروائیں گے۔

وزارت نے جاری کردہ بیان میں خبردار کیا کہ جن نجی اداروں نے ’تحفظ اجور‘ نظام کی خلاف ورزی کی انہیں مقررہ سزاؤں کا سامنا کرنا پڑے گا۔

سعودی حکومت کی جانب سے یہ اقدام نجی اداروں میں کام کرنے والے ملازمین کی تنخواہوں کی بروقت اور منظم طریقے سے ادائیگی کیلیے اٹھایا گیا ہے۔

a3w
a3w