شمالی بھارت
ٹرینڈنگ

حلقہ سورت سے بی جے پی کا امیدوار بلامقابلہ منتخب، لوک سبھا انتخابات مکمل ہونے سے پہلے ہی بھگوا پارٹی نے کھاتہ کھول دیا، جانئے وہاں کیا ہوا؟

بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کو لوک سبھا انتخابات 2024 کے مکمل ہونے سے پہلے ہی ایک سیٹ حاصل ہوگئی ہے کیونکہ حلقہ سورت سے ان کا امیدوار بلامقابلہ منتخب ہوگیا ہے۔

سورت: بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کو لوک سبھا انتخابات 2024 کے مکمل ہونے سے پہلے ہی ایک سیٹ حاصل ہوگئی ہے کیونکہ حلقہ سورت سے ان کا امیدوار بلامقابلہ منتخب ہوگیا ہے۔

الیکشن کمیشن نے سورت کے بی جے پی امیدوار مکیش بھائی دلال کو پیر کے دن بلامقابلہ منتخب ہونے کا اعلان کیا جبکہ کانگریس پارٹی کے سوا دیگر تمام امیدوار مقابلہ سے دستبردار ہو گئے تھے۔

سورت کے ضلع کلکٹر نے پرچہ نامزدگی واپس لینے کی تاریخ گزرنے کے فوراً بعد مکیشن بھائی دلال کو ممبر آف پارلیمنٹ (ایم پی) منتخب ہونے کا سرٹیفکیٹ بھی حوالے کردیا۔

بتایا گیا ہے کہ مکیش دلال کا بلامقابلہ انتخاب کانگریس امیدوار نیلیش کمبھانی کا پرچہ نامزدگی مسترد ہونے اور میدان میں موجود دیگر تمام امیدواروں کی جانب سے مقابلہ سے دستبرداری کے نتیجہ میں سامنے آیا ہے۔

بی جے پی کے مکیش دلال اور کانگریس کے نیلیش کمبھانی کے علاوہ سورت لوک سبھا سیٹ سے مزید آٹھ امیدوار میدان میں تھے۔

بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) کے پیارے لال بھارتی سورت سیٹ کے لئے مقابلے سے دستبردار ہونے والے آخری امیدوار تھے۔

گجرات کے وزیر اعلی بھوپیندر پٹیل نے مکیشن دلال کو مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ ان کی قبل از انتخابات جیت لوک سبھا انتخابات 2024 میں بی جے پی کی تاریخی فتح کا آغاز ہے۔

انہوں نے ایکس پر لکھا کہ یہ لوک سبھا انتخابات میں گجرات سمیت پورے ہندوستان میں بی جے پی کی تاریخی جیت کا آغاز ہے۔ یہ گجرات کی تمام 26 سیٹوں پر بی جے پی کی شاندار جیت کے ساتھ کمل کے کھلنے کا واضح اشارہ ہے۔

بتایا گیا ہے کہ اتوار کو انتخابی عہدیدار نے کانگریس امیدوار نیلیش کمبھانی کے کاغذات نامزدگی کو بطور گواہ دستخط کرنے والے لوگوں کے جعلی دستخط کی بنیاد پر مسترد کردیا۔

کانگریس امیدوار کے پرچہ نامزدگی کی منسوخی کے حکم نامے میں کلکٹر نے لکھا کہ کمبھانی اور اس کے ڈمی امیدوار سریش پادشالا کے نامزدگی فارم میں گواہ کے طور پر جن لوگوں نے دستخط کیے، وہ ان کے جعلی دستخط تھے۔ انہوں نے مکیش دلال کو لوک سبھا انتخابات میں کامیابی کا سرٹیفکیٹ بھی حوالہ کردیا۔

لوک سبھا انتخابات 2024 کے لئے گجرات کی تمام 26 سیٹوں پر 7 مئی کو ایک ہی مرحلے میں پولنگ ہوگی۔

اسی دوران کانگریس پارٹی نے مکیش دلال کے بلامقابلہ انتحٓاب پر شدید ردعمل کا اظہار کیا ہے۔ سینئر کانگریس لیڈر جئے رام رمیش نے ایکس پر ایک پوسٹ کرتے ہوئے حکمراں پارٹی پر الزام لگایا کہ اس نے سورت کی سیٹ پر "میچ فکس” کرکے قبضہ کرلیا ہے حالانکہ وہ (بی جے پی) 1984 کے لوک سبھا انتخابات سے اس سیٹ پر مسلسل جیتتے آرہے ہیں۔  

انہوں نے کہا کہ مودی کے ناانصافی کے زمانہ میں ایم ایس ایم ای مالکان اور کاروباری لوگوں کو درپیش پریشانی اور غصے نے بی جے پی کو اس بری طرح خوفزدہ کر دیا ہے کہ اسے سورت لوک سبھا سیٹ کو "میچ فکس” کرکے قبل ازوقت حاصل کرلینا پڑا حالانکہ وہ اس سیٹ پر گذشتہ 40 سال سے جیتتے ہوئے آرہے ہیں۔