ایشیاء

گوہر علی خان، پاکستان تحریک انصاف کے صدرنشین منتخب

پی ٹی آئی سربراہ عمران خان نے اپنے جانشین کی حیثیت سے انہیں نامزد کیا تھا کیونکہ وہ توشہ خانہ کیس میں نااہل قرارپانے کے باعث الیکشن نہیں لڑسکتے۔ دی نیوز نے یہ اطلاع دی۔

پشاور: وکیل گوہر علی خان ہفتہ کے دن پاکستان تحریک ِ انصاف(پی ٹی آئی) کے بلامقابلہ نئے صدرنشین منتخب ہوئے۔

متعلقہ خبریں
عمران خان کے پارٹی قائدین کے خلاف تازہ فوجی کارروائی
رات کی تاریکی میں ہمارا خط ِ اعتماد چُرالیا گیا : پاکستان تحریک انصاف کا شکوہ
پاکستان میں مخلوط حکومت کی تشکیل کے لئے سرگرمیاں تیز
لاہور کی نشست پر بلاول کو شکست، دھاندلی کا الزام
پی ٹی آئی ’بلے‘ کے نشان سے محروم، الیکشن کمیشن کا فیصلہ درست قرار

پی ٹی آئی سربراہ عمران خان نے اپنے جانشین کی حیثیت سے انہیں نامزد کیا تھا کیونکہ وہ توشہ خانہ کیس میں نااہل قرارپانے کے باعث الیکشن نہیں لڑسکتے۔ دی نیوز نے یہ اطلاع دی۔

پارٹی کے تنظیمی انتخابات میں آج عمر ایوب خان بلامقابلہ سنٹرل جنرل سکریٹری منتخب ہوئے۔ پی ٹی آئی کے چیف الیکشن کمشنر نیازاللہ نیازی نے پشاور میں نتائج کا اعلان کیا۔

انہوں نے بتایا کہ علی امین گنڈاپور خیبر پختونخواہ میں اور ڈاکٹر یاسمین راشد پنجاب میں پارٹی کے صوبائی صدر منتخب ہوئے۔

الیکشن کمیشن آف پاکستان نے کہا تھا کہ پی ٹی آئی عام انتخابات کے لئے بیاٹ (بلہ) کا انتخابی نشان برقرار رکھنا چاہتی ہے تو اسے تنظیمی الیکشن کرانا ہوگا۔ پاکستان میں عام انتخابات آئندہ سال فروری میں ہونے والے ہیں۔

پشاور میں صحافیوں سے بات چیت میں گوہر علی خان نے کہا کہ وہ عمران خان کے نمائندہ کی حیثیت سے پارٹی سربراہ کی ذمہ داری سنبھالیں گے۔

ہم ملک کو آگے لے جائیں گے لیکن جب تک میں یہاں ہوں عمران خان کا نمائندہ بن کر رہوں گا جو اپنی اصولی جدوجہد کے باعث جیل میں ہیں۔ پی ٹی آئی کسی سے بھی نہیں لڑے گی۔