شمالی بھارت
ٹرینڈنگ

مسلم خواتین کو زبردستی ہولی کے رنگ لگادیاگیا، ہندو انتہا پسندوں نے شرپسندی کی انتہا کردی (ویڈیو وائرل)

2 مسلم خواتین اپنے رشتہ دار کے ساتھ بائک پر اپنے گھر جا رہی تھیں۔ اس دوران چند ہندو شرپسند بازار میں ہولی کھیل رہے تھے۔ خواتین کے انکار کرنے وہاں موجود شرپسندوں نے ان پر رنگ لگا دیا اور پانی پھینکتے رہے۔

لکھنؤ: اتر پردیش کے بجنور میں 2 مسلم خواتین کو زبردستی ہولی کے رنگ لگانے کا معاملہ سامنے آیا ہے۔ اس سے متعلق ایک ویڈیو بھی سوشل میڈیا پر وائرل ہورہی ہے۔ جس کے بعد پولیس نے کہا ہے کہ وہ رنگ لگانے والے غنڈوں کے خلاف کارروائی کرے گی۔ معاملہ دھام پور کے مہاراج مندر کے سامنے کا ہے۔

متعلقہ خبریں
شادی شدہ خاتون از خود خلع نہیں لے سکتی
سوشل میڈیا کے اثرات کی جانچ کیلئے پارلیمانی کمیٹی تشکیل
فیروزآباد کا نام چندرا نگر رکھنے کی تجویز کو منظوری
80 سال کی عمر میں دادی کی جم ورزش کی ویڈیو وائرل ویڈیو دیکھ کر لوگوں کو پسینہ آنے لگا
عورت کا حق میراث اور اسلام

بتایا جا رہا ہے کہ 2 مسلم خواتین اپنے رشتہ دار کے ساتھ بائک پر اپنے گھر جا رہی تھیں۔ اس دوران چند ہندو شرپسند بازار میں ہولی کھیل رہے تھے۔ خواتین کے انکار کرنے وہاں موجود شرپسندوں نے ان پر رنگ لگا دیا اور پانی پھینکتے رہے۔

ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ ایک شخص موٹر سائیکل پر بیٹھا ہے جبکہ اس کے پیچھے 2 مسلمان عورتیں بیٹھی ہوئی ہیں۔ پھر کچھ شرپسندوں نے ان پر پانی پھینکا اور زور زور سے ‘ہیپی ہولی’ کا نعرہ لگانے لگے۔

 خواتین نے انہیں یہ بھی کہا کہ ہم بازار جا رہے ہیں، اس طرح ہولی مت منائیں۔ پھر ایک شرپسند آیا اور موٹر سائیکل پر بیٹھے نوجوان کے چہرے پر بھی رنگ لگا دیا اور دوسرے شرپسندوں نے موٹر سائیکل پر پیچھے بیٹھی بزرگ مسلم خاتون کے چہرے پرزبردستی رنگ لگادیا۔